عکس ماضی
Poet: پنچھی
By: Abdulwadood, Rabwah

میرے ماضی کا تو ہی عکس ہے
تیرا ہی تو خیالوں میں رقص ہے

تیری ہرخطا۔۔۔۔۔تیرا ہر ستم
میرے لمحے لمحے پہ نقش ہے

نہیں راس مجھ کو اب خوشی
میری زنگی کا یہ نقص ہے

نہیں بھولتا مجھے وہ ستم گر
جانے کیسا میرا نفس ہے

کیوں ہوں اسکی میں تحویل میں
وہ جو بےوفا سا شخص ہے

Rate it: Views: 7 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 08 Aug, 2018
About the Author: Abdulwadood

Visit 36 Other Poetries by Abdulwadood »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.