میں بہت حیران تھا

Poet: UA
By: UA, Lahore

موسم کچھ ویران تھا
دل بھی پریشان تھا
سانس چل رہی تھی
اور بدن بے جان تھا
کِسی انہونی کا
ذہن میں گمان تھا
اپنی ایسی حالت پہ
میں بہت حیران تھا
ایک زمانے سے دل میں
بسا کوئی مہمان تھا
آج وہ ایسے مِلا
جیسے پشیمان تھا
اس کے ہمراہ آج کوئی
اجنبی انسان تھا
اجنبی جانا جِسے
وہ تو مہربان تھا
میرے مہربان کے
دِل کا وہ مہمان تھا
موسم کچھ ویران تھا
دل بھی پریشان تھا
سانس چل رہی تھی
اور بدن بے جان تھا
کِسی انہونی کا
ذہن میں گمان تھا
اپنی ایسی حالت پہ
میں بہت حیران تھا
 

Rate it:
26 Mar, 2019

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: uzma ahmad
sb sy pehly insan phr Musalman and then Pakistani
broad minded, friendly, want living just a normal simple happy and calm life.
tmam dunia mein amn
.. View More
Visit 2934 Other Poetries by uzma ahmad »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City