ہاں مگر یہ سچ ہے

Poet: UA
By: UA, Lahore

تم سے محبت کا
دعوٰی تو نہیں
ہاں مگر یہ سچ ہے
کہ تمہاری آنکھوں کی نمی
ویران کرتی ہے
تم سے محبت کا دعوٰی تو نہیں
ہاں مگر یہ سچ ہے
کہ تمہارے چہرے کی اداسی
پریشان کرتی ہے
تم سے محبت کا
دعوٰی تو نہیں
ہاں مگر یہ سچ ہے
کہ تمہارے ہونٹوں کی مسکان
شادمان کرتی ہے
تم سے محبت کا
دعوٰی تو نہیں
ہاں مگر یہ سچ ہے
کہ تمہارے لہجے کی شرارت
حیران کرتی ہے
تم سے محبت کا
دعوٰی تو نہیں
ہاں مگر یہ سچ ہے
تم دِکھائی نہ دو تو
اپنی ہستی بےجان لگتی ہے
تم سے محبت کا
دعوٰی تو نہیں
ہاں مگر یہ سچ ہے
تم نظر آجاؤ تو
جان میں جان پڑتی ہے
تم سے محبت کا
دعوٰی تو نہیں
ہاں مگر یہ سچ ہے

Rate it:
11 Sep, 2019

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: uzma ahmad
sb sy pehly insan phr Musalman and then Pakistani
broad minded, friendly, want living just a normal simple happy and calm life.
tmam dunia mein amn
.. View More
Visit 2962 Other Poetries by uzma ahmad »

Reviews & Comments

میرا اندازِ بیاں گرچہ بڑا شوخ نہیں ہے مگر یہ سچ ہے کہ آپ ہبت اچھا لکھ رہی ہیں
آپ کے لکھنے کا انداز بہت ہی خوبصورت ہے پڑھ کر دل باغ باغ ہو گیا چہرے پہ بشاشت آگئی اور یہ کہ میں زیرِ لب مسکرا دیا۔
سدا خوش رہیں اور ایسے ہی خوبصورت کلام سے نوازتی رہیں
دعا گو۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔وسیم

By: Wasim Ahmad Moghal, Lahore on Sep, 13 2019

Ha magar ya Sach ha ap likhti ha kamal jesy likhty ha alfaz
Buhat khubsurti say ap lafzo ko sameetati ha buht acha likha ap nay
Be happy alwayz

By: Ayesha khan, D.pakistan on Sep, 12 2019

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City