حمد باری تعالیٰ
Poet: ڈاکٹر شاکرہ نندنی
By: Dr. Shakira Nandini, Oporto

یاد دل میں بسی ایسی تیری
صرف نظروں میں ہے ہستی تیری

تری ہستی کے سامنے ہیچ ہیں سب
سب پہ لازم ہے بندگی تیری

تجھ پہ ایماں ہو تجھ سے ڈرنا ہو
کتنی آساں ہے دوستی تیری

میں کیا ہوں کیا میرا ہوگا
چیزیں میری جو ہیں وہ بھی تیری

جو بھی مر مٹ کے تیرا بن جائے
نگہبان اس کی خدائی تیری

ہر کسی کو خوشی اپنی محبوب
مجھ کو محبوب ہے خوشی تیری

جو نہ پایا تجھے تو کیا پایا
کتنی پر لطف آگہی تیری

آنکھیں اندھی ہیں اس کی جس نے بھی
خود کو دیکھا شان نہ دیکھی تیری

کان دونوں ہی اس کے بہرے ہیں
بات سن کر بھی نہ سنی تیری

دل اس کا دل نہیں ہے پتھر ہے
جس نے بھی بات نہ سمجھی تیری

اس کی تعریف پہ مائل شاکرہ
زہے قسمت ، ہے شاعری تیری

رمضان المبارک میں مسلمان بھائیوں کے لئے خاص تحفہ۔ قبول کیجئے

Rate it: Views: 0 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 02 Jun, 2018
About the Author: Dr. Shakira Nandini

I am settled in Portugal. My father was belong to Lahore, He was Migrated Muslim, formerly from Bangalore, India and my beloved (late) mother was con.. View More

Visit 280 Other Poetries by Dr. Shakira Nandini »
 Reviews & Comments
thanks
By: Dr. Shakira Nandini, Oporto on Aug, 03 2018
Reply Reply to this Comment
Masha Allah, Allah Pak aap ko Eman ki daulat day aur Hindu say Muslim Banaye. Thanks Shakira Nandini ji aap nay Allah Pak ki shan main Likha
By: Fareed Shahzad, Karachi on Jul, 28 2018
Reply Reply to this Comment
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.