کیا مصباح 65 سالہ ریکارڈ توڑ پائیں گے؟

21 Apr, 2017 بی بی سی اردو
کیا پاکستان کے کپتان مصباح الحق اپنے کیرئیر کی آخری سیریز میں پاکستان کو ویسٹ انڈیز کے خلاف فتح دلانے میں کامیاب ہو جائیں گے؟
مصباح الحق

کیا مصباح یہ ثابت کر پائیں گے کہ وہ واقعی پاکستان کرکٹ کے عظیم ترین کپتان تھے؟

سن ہے 2000 اور تاریخ ہے 29 مئی۔ پاکستان اور ویسٹ انڈیز انٹیگا میں مد مقابل ہیں۔ یہ اس دورے کا آخری ٹیسٹ میچ ہے۔ اس سے پہلے کھیلے گئے دونوں ٹیسٹ ڈرا ہو چکے ہیں لیکن یہ میچ پہلے دن کے پہلے سیشن سے ہی فیصلہ کن نظر آ رہا تھا۔

اور اب پانچویں دن کا اہم ترین سیشن جاری ہے۔ ویسٹ انڈیز کو فتح کے لیے 22 رنز درکار ہیں اور اس کے آٹھ کھلاڑی آوٹ ہو چکے ہیں۔

پاکستان نے ٹی ٹوئنٹی کے بعد ون ڈے سیریز بھی جیت لی

ویسٹ انڈیز شارجہ ٹیسٹ میں فاتح، سیریز پاکستان کے نام

وسیم اکرم کے ان سوئنگنگ یارکر بار بار والش کے پیڈز سے ٹکرا رہے ہیں مگر امپائرز کسی دلچسپی کا اظہار نہیں کر رہے۔ جوں جوں ہدف قریب آتا جا رہا ہے کریز پر موجود کپتان جمی ایڈمز اور کورٹنی والش اپنے اعصاب کھو رہے ہیں۔

دو بار غلط سنگلز کی کال دی جاتی ہے، پاکستان تاریخ رقم کرنے کے عین قریب آتا ہے لیکن دونوں بار ثقلین مشتاق رن آوٹ کا موقع ضائع کر دیتے ہیں۔

وکٹوں کے پیچھے سفید گلوز کے بیچ ایک چہرہ دکھائی دیتا ہے اور سکرین پر ایک عبارت نمودار ہوتی ہے۔

' معین خان کریبین میں ٹیسٹ سیریز جیتنے والے پہلے پاکستانی کپتان بننے کی کوشش کر رہے ہیں۔'

جس کا مطلب یہ ہے کہ پاکستان اپنے ٹیسٹ کرکٹ کے 48 سال میں آج تک ویسٹ انڈیز کو اس کے ہوم گراونڈز میں زیر نہیں کر پایا۔

چند لمحوں بعد ناقابل شکست کپتان جمی ایڈمز بلا لہراتے ہوئے اس گراؤنڈ سے نکلتے ہیں اور 11وکٹیں حاصل کرنے والے وسیم اکرم اور سینچری بنانے والے یوسف یوحنا ہارے ہوئے لشکر کے ہمراہ دکھائی دیتے ہیں۔

آج وہ دن بیتے 17 سال ہو چکے اور پاکستان کو ٹیسٹ کرکٹ کھیلتے ہوئے 65 برس بیت چکے ہیں۔

پاکستان

کیا مصباح الحق ویسٹ انڈیز میں ٹیسٹ سیریز جیتنے والے پاکستان کے پہلے کپتان بن سکیں گے؟

اس بیچ کتنے بڑے بڑے کپتان آئے، کتنے نامی بیٹسمین گزرے اور کیسے کیسے عظیم فاسٹ بولرز اور سپنرز کھیلے لیکن آج بھی تاریخ وہیں منجمد ہے۔ آج بھی ویسٹ انڈیز اپنے ہوم گراؤنڈمیں پاکستان کے لیے ناقابل شکست ہے اور پاکستان کی تاریخ کے کامیاب ترین کپتان مصباح الحق بھی ایک دورہ کرنے کے باوجود یہ تاریخ بدل نہیں پائے۔

جس وقت مصباح الحق نے سڈنی میں یہ کہا تھا 'اب نیا سال شروع ہو چکا، ریٹائرمنٹ کی بات پچھلے برس کا قصہ ہوا'، تب شاید ان کے ذہن میں کہیں نہ کہیں یہ بات گردش کر رہی تھی کہ آسٹریلیا کے علاوہ بھی ایک ایسی سرزمین ہے جہاں پاکستان آج تک کوئی ٹیسٹ سیریز نہیں جیت پایا۔ شاید انھوں نے اپنی ریٹائرمنٹ کو موخر اسی لیے کیا ہو کہ وہ جانے سے پہلے ایک اور ریکارڈ پاکستان کے نام کرتے جائیں۔

اس ٹور سے پہلے یہ تو متوقع ہی تھا کہ مصباح اپنی ریٹائرمنٹ کا اعلان کر دیں گے مگر یہ کسی کے وہم و گمان میں بھی نہ تھا کہ یہ سیریز یونس خان کے کرئیر کی بھی آخری سیریز ہو گی۔ سو اس بار صرف تاریخ کا بوجھ ہی نہیں بلکہ دو عظیم کھلاڑیوں کی رخصتی کا قلق بھی پاکستان کے ہمراہ ہو گا۔

اس میں دو رائے نہیں کہ پاکستان کی یہ ٹیم ویسٹ انڈیز سے بدرجہا بہتر ہے اور محدود اوورز کی دونوں سیریز جیت چکی ہے لیکن پریشان کن بات یہ ہے کہ چھ ماہ قبل جب ویسٹ انڈیز کی یہی ٹیم عرب امارات کے دورے پر تھی تو محدود اوورز کے تمام میچز ہارنے کے باوجود پہلے ٹیسٹ میں فتح کے عین قریب پہنچ گئی تھی اور تیسرا ٹیسٹ واضح برتری کے ساتھ جیت گئی تھی۔

کرکٹ

گذشتہ سال دونوں ٹیموں کا عرب امارات میں سامنا ہوا تھا جہاں آخری میچ میں ویسٹ انڈیز نے فتح حاصل کی تھی

جہاں یہ بات پاکستان کے لیے باعث اطمینان ہے کہ اس جیتنے والی ٹیم کے دو اہم ترین سینئیر کھلاڑی براوو اور سیموئلز اس بار سکواڈ کا حصہ نہیں ہیں، وہیں یہ بات فکر انگیز بھی ہے کہ ٹور کے واحد وارم اپ میچ میں ویسٹ انڈیز کرکٹ بورڈ الیون کے 419 رنز کے جواب میں پاکستانی ٹیم صرف 192 رنز ہی بنا سکی ۔الوداعی سیریز کھیلنے والے یونسخان سات جبکہ مصباح آٹھ رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

ایسے میں ذمہ داری کا بوجھ کون اٹھائے گا؟ کیا اظہر علی ایک بار پھر یہ ثابت کر پائیں گے کہ مصباح کے جانے کے بعد وہ اس بیٹنگ لائن کو سنبھال سکتے ہیں؟ کیا اسد شفیق یہ بتا پائیں گے کہ وہ یونس خان کی ریٹائرمنٹ سے پیدا ہونے والے خلا کو پر کر سکتے ہیں؟ کیا سرفراز واقعی خود کو مصباح کی جانشینی کا اہل ثابت کر سکیں گے؟

کیا مصباح یہ ثابت کر پائیں گے کہ وہ واقعی پاکستان کرکٹ کے عظیم ترین کپتان تھے؟

کیا پاکستان 65 سالہ ریکارڈ توڑ پائے گا؟

Watch Live News

بھارت امریکہ کا سچا دوست ہے، صدر ٹرمپ

27 Jun, 2017 وائس آف امریکہ اردو

بھارتی وزیر اعظم نے دونوں ملکوں کے درمیان خوشگوار تعلقات اور تعاون کا ذکر کر تے ہوئے کہا & ... مزید

اسلامی انتہا پسندی کے خلاف مل کر لڑیں گے، صدر ٹرمپ

27 Jun, 2017 وائس آف امریکہ اردو

بھارتی وزیر اعظم نے دونوں ملکوں کے درمیان خوشگوار تعلقات اور تعاون کا ذکر کر تے ہوئے کہا & ... مزید

سمارٹ فون پاکستان کی زرعی پیداوار میں اضافہ کرے گا

27 Jun, 2017 وائس آف امریکہ اردو

موبائل فون کے یہ پیغامات ایک خود کار نظام کے ذریعے بھیجے جاتے ہیں۔ اس نظام میں سیٹلائٹ سے  ... مزید

بھارت کو سی 17 ٹرانسپورٹ طیارے اور حربی آلات کی مجوزہ فروخت

27 Jun, 2017 وائس آف امریکہ اردو

ڈفنس سکیورٹی کوپریشن ایجنسی (ڈی ایس سی اے) کے بیان میں کہا گیا ہے کہ بھارت اِن دِنوں سی 17 ... مزید

حزب المجاہدین کا لیڈر، سید صلاح الدین دہشت گرد قرار

27 Jun, 2017 وائس آف امریکہ اردو

’’یہ اقدام ایسے غیر ملکی دہشت گردوں اور دہشت گرد تنظیموں کے خلاف کیا جاتا ہے، جو دہشت گردا ... مزید

حزب المجاہدین کے لیڈر، سید صلاح الدین دہشت گرد قرار

27 Jun, 2017 وائس آف امریکہ اردو

’’یہ اقدام ایسے غیر ملکی دہشت گردوں اور دہشت گرد تنظیموں کے خلاف کیا جاتا ہے، جو دہشت گردا ... مزید

عید پر دوحہ کے زیادہ تر ہوٹل خالی پڑے ہیں

27 Jun, 2017 وائس آف امریکہ اردو

ایک فائیواسٹار ہوٹل کے عہدے دار نے بتایا کہ اس موقع پرعموماً ہمارے کمرے سعودی عرب اور بحری ... مزید

دہشت گرد مواد ہٹانے کے لیے سماجی میڈیا کے بڑے اداروں کا اشتراک عمل

26 Jun, 2017 وائس آف امریکہ اردو

ٹیکنالوجی کے عالمی اداروں نے پیر کے روز اعلان کیا کہ انسداد دہشت گردی کے کام میں مدد دینے  ... مزید

تھیم پارک کی چئیر لفٹ سے گرنے والی لڑکی بال بال بچ گئی

26 Jun, 2017 نیو

نیویارک: امریکا کے واقع تھیم پارک میں25 فٹ اونچی چئیر لفٹ سے گرنے والی لڑکی کو جھولے سے گر ... مزید

وزیراعظم کا سانحہ بہاولپور پر دکھ کا اظہار، متاثرین کیلئے نوکریوں کا اعلان

26 Jun, 2017 اب تک

وزیراعظم کا سانحہ بہاولپور پر دکھ کا اظہار، متاثرین کیلئے نوکریوں کا اعلانبہاولپور: (26 جو ... مزید

Load More
Post Your Comments
Select Language:    
MORE ON NEWS
MORE ON HAMARIWEB