صحافی مختار علی کو رہا کیا جائے، محکمہٴ خارجہ کا مطالبہ

13 Jan, 2018 وائس آف امریکہ اردو
واشنگٹن —امریکہ نے آذربائیجان کے صحافی افگن مختار علی کو 12 جنوری کو چھ برس قید کی سزا سنائے جانے پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔محکمہٴ خارجہ کی ترجمان، ہیدر نوئرٹ نے کہا ہے کہ اطلاعات کے مطابق، مختار علی کو 30 مئی کو جورجیا سے اغوا کیا گیا، جب کہ بعدازاں اُنھیں آذربائیجان میں اسمگلنگ اور دیگر الزامات پر گرفتار کیا گیا، جس کے بارے میں بتایا جاتا ہے کہ اِس کے پیچھے سیاسی محرکات کارفرما ہیں۔ترجمان نے آذربائیجان کی حکومت سے مسٹر مختار علی اور تمام دیگر اسیروں کو رہا کرنے کا مطالبہ کیا، جنھیں اپنی بنیادی آزادی کے اظہار کی پاداش میں نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ترجمان نے کہا ہے کہ ’’ہم اغوا کے بارے میں جارجیا کی جانب سے کی جانے والی تفتیش کا قریب سے جائزہ لے رہے ہیں‘‘، اور اِس بات کا اعادہ کیا کہ ’’اس معاملے کو مکمل، بروقت اور شفاف ہونا چاہیئے‘‘۔
 

Watch Live News

 مزید خبریں 
« مزید خبریں
Post Your Comments
Select Language: