جعلی پیر مسعود احمد صدیقی لاثانی سرکار ۔۔۔!!

(جاوید صدیقی, کراچی)

اسلامی جمہوریہ پاکستان میں ہر زمانے ،ہر دور میں کہیں جعلی پیر تو کہیں جعلی پیغمبروں کا فتنہ پیدا ہوتا رہاہے ، آجکل فیصل آباد میں عقل سے اندھا، علم سے نا آشنا،روحانیت سے خالی جعلی پیر مسعود احمد صدیقی عرف لاثانی سرکار اپنے مس مریزم (عمل تنوین)کے ذریعے ہزاروں لوگوں کو گمراہ اور دین محمدی کی اصل روح سے دور کرنے کا سلسلہ جاری رکھا ہوا ہے ، جودہ دور میں مشتہر ہونے کا سب سے بڑا ذریعہ میڈیا کے پلیٹ فارم سے اپنے مس مریزم یعنی عمل تنوین کے ذریعے کچے ذہنوں کو اپنے مزموم مقاصد کیلئے استعمال کررہا ہے ۔معزز قائرین۔!! نبی کریم ﷺ کی تعلیمات اور احکامات کی تعمیل صحابہ کرام سے شروع ہونے والی کڑیاں امام تک جاپہنچیں پھر ان سے سلاسل میں منتقل ہوکر صوفیاکرام پیر عظام کے ذریعے عوام الناس تک پیغام الٰہی اور دین محمدی کا پرچار جاری رہا ہے، خانقاہیں،آستانے، مساجد اوردارلعلوم کےذریعے دین محمدی یعنی دین اسلام کو پھیلانے کیلئے قرآن و احادیث کی روشنی میں آگاہی فراہم کی گئیں، بزرگان دین نے طریقت کو شریعت کی معراج کہا ہے ان کےمطابق مکمل شریعت کی پابندی کے بعد طریقت کی منازل کی جانب بڑھا جاتا ہے بغیر شریعت طریقت کا ملنا نہ ممکن ہے لیکن اس روحانی عمل میں نفس امارہ کو مکمل دفن کرنا پڑتا ہے جبکہ نفس لوامہ بھی نفس امارہ کی دوسری جانب مدفن کردیا جاتا ہے ڈرف نفس مطمعینہ ہی روح کیساتھ آگے بڑھتا ہے اور اسے روحانی منازل پر پہنچاتا ہے ، اس روحانی سفر میں کبھی بھی اگر لوامہ یا امارہ زندہ ہوجائے تو تمام سفر بے سود و بیکار ہوکر رہ جاتا ہے اسی لیئے بزگان دین اس روحانی سفر پر جانے والے بندہ خدا کیلئے سختی سے حکم فرماتے ہیں کہ جب تم سفر پر قائم ہو اُس وقت تک دنیا سے اوجھل رہنا نہیں تو ابلیس تمہارے تمام عمل کو ضائع کرنے کی بھرپور کوشش کریگا، جب تم کامیاب ہوجاؤ گے تو خود اللہ اور اس کے حبیب ﷺ کی جانب سے تمہیں اشارہ مل جائیگا کہ تم سے مخلوق خدا کیلئے کیا کام لیا جائیگا۔معزز قائرین !! موجودہ زمانے میں نقشبندیہ، سہروردیہ، قادریہ اور چشتیہ مسلک کے بزگان دین کے پیروکار لاکھوں کی تعداد میں ہیں ان کے علاوہ دیوبندی، اہل حدیث اور اہل تشیع مسلک کے بزگان دین قرآن و سنت کے ذریعے دین محمدی کو پھیلانے میں اپنی اپنی سمت سے خدمات جاری کیئے ہوئے ہیں، ان مسالک کی نا اتفاقی کی وجہ سے دین محمدی کے دشمن بیرون طاقت ہمارے درمیان عجیب و غریب فتنے باز پیدا کرکے ہمارے اتحاد کو پاش پاش کرنے کی کوشش کرتے چلے آرہے ہیں، ملک پاکستان کے عوام دین محمدی سے بے پناہ لگاؤ، محبت، عقیدت رکھتی ہے، دین محمدی ﷺ کی خاطر جان نچھاور کرنے میں ذرا برابر کوتاہی نہیں برتتے کیونکہ ان کی جسم و روح میں عشق رسول پیوستہ ہے۔ جعلی پیر مسعود احمد صدیقی عرف لاثانی سرکارکی کتاب وارث فقر مکمل جھوٹ، لفاظی سے پر ہے، سب سے بڑی حیرت و تعجب کی بات تو یہ ہے کہ خود جعلی پیر لاثانی سرکار نے بیعت حاصل نہیں کی، ہر کام عالم رویا میں کیا، خود کو نبی کریم ﷺ کا لاڈلا کہلوانے والا جعلی پیر فرشتوں پر حکم چلانے کا دعویٰ کرتا ہے ، اس سے کوئی پوچھے کہ تو نے کبھی کسی فرشتے کو دیکھا بھی ہے کہ نہیں!! یقینا ً ابلیس کا عکس دیکھنے والے ایسی طرح کی باتیں کرتے ہیں، پاکستان ، بھارت، بنگلہ دیش یہ وہ ممالک ہیں جہاں کے مسلمان کمزور عقیدے کے مالک ہوتے ہیں جو خود تحقیق اورحقائق کی تلاش کرنے سے کتراتے ہیں بس بیٹھے بٹھائے ،بغیر محنت کیئے پھل مانگنے کے عادی ہیں اسی چکر میں یہ لوگ اپنے ایمان سے ہاتھ دھو بیٹھتے ہیں، عشق رسول اور عشق الٰہی کا تقاضہ ہے کہ انسان بندگی کرے تو ایسی کہ خدا خود پوچھے تیری رضا کیا ہے اور عشق رسول کرے تو اس طرح کہ آقائے نامدار حضرت محمد ﷺ کا دیدار نسیب ہوجائے۔معزز قائرین۔۔۔!!آج سے تقریبا تیس سال قبل جب میں کم عمرتھا اُس وقت ہم ایک گھر میں کرائے پر رہتے تھے، مالک مکان کی بیگم پہنچ وقتہ اشراق و چاشت، اوابین اور تہجد کی باقائدہ پابند تھیں روزانہ فجر ک نماز کے بعد قرآن پاک پڑھتی تھیں اور عشا کی نماز کے بعد مکمل ختم کرلیا کرتی تھیں دو سال سے یہی معمول ہم دیکھ رہے تھے، میری بڑی بہنیں ان کے گھر کا کھانا پکاتی تھیں، ایک صبح فجر کے بعد ایسی خوشبو پھیلی کہ تمام گھر مہک گیا ، وہ جس کپڑے کو ہاتھ لگاتی خوشبو ختم نہ ہوتی، جس مریض کو پانی پر دم کرتی وہ انتہائی موذی مریض سے چھٹکارہ پالیتا تھا ، لوگوں کو تانتا بانتا بندھ گیا اس وجہ سے ان کی عبادات میں بہت خلل پڑگیا آپ کو ایک شب بشارت ہوئی کہ فی الفور یہ شہر چھوڑ دو ،دادی نے اپنے شوہر دادا سے بشارت بتائی تو آپ نے فوراً وہ شہر چھوڑ دیا اور گمنام کی زندگی گزاری، کئی سالوں بعد جب ان کی صاحبزادی سے ملاقات ہوئی تو انھوں نے بتایا کہ وہ ہمارے ہاں آگئیں تھیں اور یہیں سکونت اختیار کی ،دادی کا انتقال کے بارے میں بتایا کہ ایسی موت کیلئے ممکن ہے سب ہی خواہش کریں بہت خوبصورت موت تھی، بحرکیف بہت کچھ دیکھا، بہت کچھ پایا لیکن کبھی بھی ان کی زبان سے کچھ نہ سنا ، جنہیں عنایت کیا جاتا ہے ان کی زبان بند رہتی ہیں اور جو خالی ہوتے ہیں وہ شعبدی بازی اور اپنے مس مریزم (عمل تنوین)کے ذریعےلوگوں کو گمراہ کرنے کی کوشش کرتے ہیں انہی لوگوں میں سے جعلی پیر مسعود احمد صدیقی عرف لاثانی سرکار بھی ہیں۔معزز قائرین۔۔۔!!میں نے بھی کئی بزگان دین کی کتابوں کا مطالعہ کیا ہے ان تمامشریعت و طریقت کی کتب میں کہیں بھی ایسی باتیں یا اھکامات نہیں ملے جو جعلی پیر مسعود احمد صدیقی عرف لاثانی سرکار اپنے جلسے، جلوس اور نجی محفلوں میں کیا کرتے ہیں،ایسے بہروپی ، جعل ساز، منافق و فاسق پیر زیادہ عرصہ اپنی دکان نہیں چلاسکتے ہیں کیونکہ اللہ اور اس کے حبیب ﷺ سے مذاق بہت سخت پڑتا ہے ،اس کی بہت سخت پکڑ ہے وقت بہت جلد ان جعلی شخص کو بے نقاب کریگا آمین ثما آمین، ہونا تو یہ چاہیئے کہ ہر مسلمان پاکستانی اپنے معاشرتی معاملات کو درست کرے تاکہ اللہ ہم سب پر رحم و کرم کی بارش فرمائےاور دعا کرنی چاہیئے کہ اے رب ہمیں صراط المستقیم پر چلانا، اس راہ پر جس پر تو نے انعام فرمایا ہےآمین ثما آمین ۔۔ ۔۔پاکستان زندہ باد، پاکستان پائندہ باد۔۔!!

Comments Print Article Print
 PREVIOUS
NEXT 
About the Author: جاوید صدیقی

Read More Articles by جاوید صدیقی: 308 Articles with 156530 views »
Currently, no details found about the author. If you are the author of this Article, Please update or create your Profile here >>
23 Oct, 2018 Views: 1560

Comments

آپ کی رائے