جمہوریت انسانیت کے ساتھ بجٹ بھی کھا گئی

(Syed Maqsood ali Hashmi, )

کرپشن ہی کرپشن جنگی تو معمولی اکسائیز کے ملازم کے گھر سے 33 کروڑ کیش نکلنا حیران کن بات ہے کے اس نے گورنمنٹ کو کتنا نقصان پہنچایا کے کے اسکا گھر رشوت کی کمائی سے بھر گیا بہر حال پاکستانی فوج تو معصوم ہے۔اب کچھ حقیقت بیان ہو جاے
*

انکی گاڑیاں ٹائم پر سٹارٹ ہو جاتی ہیں ، پٹرول ختم نہیں ہوتا ،بندوقیں ہر وقت ریڈی ہوتی ہیں ، کرینیں ہر وقت کارآمد ، دن ہو رات ہو ، عید ہو بقرعید ہو ،بارش ہو ،طوفان ، سردی ہو یا گرمی جب پکارو ادھر حاضر
*کبھی نہیں کہا*
ہمیں رٹن آرڈر نہیں ملے ، کسی نے بتایا نہیں ، چیف صاحب سو رہے تھے ،کور کمانڈر سیر کیلئے گئے ہیں واپس آئیں گے تو فیصلہ ہو گا پہلے ہمیں بارش سے نپٹنے کیلئے ضروری سامان دو ، تب کام شروع ہو
*کوئی حیلے بہانے نہی*
زلزلہ ہو تو سارا سامان موجود ،آگ لگ جائے تو سارا سامان اور فنڈز موجود
سیلاب آ جائے تو سارا سامان اور فنڈ ز موجود
*کبھی کوئی شکایت نہیں کی*

اور عجیب اور حیران کن بات یہ ہے کہ یہ سارے کام وار زون میں کرنے پڑتے ہیں ،

بندوقیں اور اسلحہ ساتھ رکھنا پڑتا ہے بلٹ پروف جیکٹ پہن کر ریسکیو کا کام کرنا پڑتا ہے ،کہ کہیں کوئی ہم وطن قریب آ کر پھٹ ہی نہ جائے

*بیک وقت جنگ بھی اور مدد بھی ریسکیو بھی*

ایسی فوج کہیں نہ سنی ھے نہ پڑھی ھے نہ دیکھی ھے

فوجیں امن کی ضامن ہوتی ہیں صومالیہ دیکھو عراق دیکھو شام دیکھو برما دیکھو یمن دیکھو افغانستان دیکھو

*یہ فوج نہیں یہ اللّٰه پاک کی نعمت ھے ، یہ اللّٰه کا احسان ھے*

باقی ملکی ادارے دیکھو پتا بھی ھے ہر سال سیلاب آتا ہے پھر بھی کوئی تیاری نہیں ہوتی

پتا جو ہے کہ فوج نے آ ہی جانا ہے
یقینا فوج ملک کی ہے ،لیکن ان کاموں کیلئے نہیں جو تم اس سے لیتے ہو

*اللہ میرے وطن اور میری فوج کو سلامت رکھے آمین. جن لوگوں کو پاک فوج کی تنخواہوں پر مسلسل تکلیف رہتی ہیں ان کے لیے ایک ہلکا پھلکا سا موازنہ ۔۔۔۔ !

دنیا کے چند اہم ممالک کا فوج پر فی کس خرچہ ۔۔۔۔

امریکہ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 409،596 ڈال
برطانیہ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔314،105 ڈالر
سعودی عرب ۔۔۔۔ 272،805 ڈالر
فرانس۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 250،675 ڈالر
اسرائیل ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔100،849 ڈالر
چین ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 92،456 ڈالر
روس ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 81،893 ڈالر
افغانستان۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 59،487 ڈالر
انڈیا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 42،188 ڈالر
ترکی۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 36،819 ڈالر
ایران ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 23،518 ڈالر
بنگلہ دیش۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 17،597 ڈالر

پاکستان ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 13،513 ڈالر

پاک فوج دنیا میں کم ترین پیسے لینے والی فوج ہے!

لیکن اپنے ان محدود سے وسائل میں امریکہ، روس، انڈیا اور اسرائیل جیسی طاقتوں سے ٹکر لے رکھی ہے.

دنیا کا جدید ترین نیوکلئیر میزائل پروگرام، لڑاکا طیارے، جدید ترین ٹینک اور ڈرون طیارے بنانے میں کامیاب رہی۔

دنیا کی سب سے بڑی پراکسی جنگ
بھی لڑ رہی ہے۔

لیکن جب ان بدبختوں سے کہا جائے کہ پاک فوج کا جوان شہید ہوا ہے تو نہایت بے رحمی سے جواب دیتے ہیں ۔۔۔ " تنخواہ کس بات کی لے رہے ہیں" ۔۔۔۔۔ *پاک فوج کو 1100 ارب کے طعنے دینے والوں سے سوال ۔۔۔۔!!* !!

پاکستان کے ٹوٹل 5900 ارب بجٹ میں سے گیارہ سو ارب فوج لیتی ہے۔ اس کے بدلے فوج آپ کے لیے کیا کر رہی ہے۔۔؟

*تو اب سن لو :::*

اسی بجٹ میں سے سات لاکھ فوج کو تنخواہ دی جا رہی ہے۔

اسی بجٹ میں سے دنیا کی نمبر ون انٹلیجنس ایجنسی چلائی جا رہی ہے۔

اسی بجٹ میں سے دشمن کی تین خطرناک جنگی ڈاکٹرائین کا مقابلہ کیا جا رہا ہے۔

اسی بجٹ میں سے دنیا کا پانچواں بڑا نیوکلئیر پروگرام چلایا جارہا ہے۔ جو بہت جلد دنیا کا تیسرا بڑا خطرناک ایٹمی پروگرام بن جائے گا۔

یاد رہئیے یہی فوج ہے جس نے گزشتہ بارہ سالوں میں عوام کی خاطر پندرہ ہزار جانیں دی ہیں۔

فوج تو 1100 ارب لیتی ہے مگر ہر سیلاب ، زلزلہ ، طوفان اور پولیو مہم میں عوام کا ساتھ دیتی ہے۔

*ذرہ سوچو باقی کیا کرتے ہیں۔۔؟؟؟*

*باقی بجٹ کہاں جاتا ہے۔۔۔؟؟؟؟*

باقی 4800 ارب تو آپ کی جمہوریت ہی لیتی ہے نا وہ یہ بجٹ کہاں لگا رہی ہے۔۔؟؟؟

سٹیل مل پر۔۔؟؟؟ وہ تو خسارے میں جاری ہے۔

پی آئی اے پر۔۔؟؟؟ وہ تو تاریخی گھاٹا کھا رہی ہے۔

پولیس نظام پر۔۔؟؟؟ اس کا حال آپ کے سامنے ہی ہے۔

تعلیم پر۔۔؟؟؟ مگر پاکستان کا تو ڈیڑھ کروڑ بچہ سکولوں سے باہر ہے۔

صحت پر۔۔؟؟ لیکن پاکستانی تو ہسپتالوں کے فرشوں پر مر رہے ہیں۔

*تو پھر جمہوریت یہ بجٹ کہاں لگا رہی ہے۔ ؟؟؟؟*

*حضور گیارہ سو ارب لینے والی فوج کے زیر اثر چلنے والی آئی ایس آئی اور نیوکلیئر سسٹم دنیا کے ٹاپ ترین سسٹم ہیں۔*

*مگر 4800 ارب لینے والی جمہوریت کے ادارے کہاں ہیں۔؟؟؟*

تو پھر یہ بجٹ کے طعنے کس کو ملنے چاہیں ۔
فوج کو یا پھر آپ کے سیاسی نظام کو۔۔؟؟

 

Comments Print Article Print
 PREVIOUS
NEXT 
About the Author: Syed Maqsood ali Hashmi

Read More Articles by Syed Maqsood ali Hashmi: 110 Articles with 37111 views »
Currently, no details found about the author. If you are the author of this Article, Please update or create your Profile here >>
21 Sep, 2020 Views: 233

Comments

آپ کی رائے