ارادہ

(Wasim A Khattak, Peshawar)
تمھیں شادی کیلئے کیسا مرد چاہیئے ،سہیلی نے دوسری سہیلی سے پوچھا
میں پہلی خاندان اسکی دوسری ترجیح ہو ،صرف اور صرف وہ میرا ہو،
کسی لڑکی کے ساتھ تعلق نہ ہو اور میرے سوا کسی لڑکی کو نہ دیکھے ،
اس کے اے ٹی ایم کارڈز ، بنک اکاؤنٹ میرے پاس ہوں
میرے لئے ناشتہ ، لنچ، ڈنر تیار کرے ، ہر ہفتے شاپنگ کرائے
میرے خاندان والوں کے ساتھ ہر ہفتے ملاقات ہو ،
میں جو کہوں وہ مانے ، یہ کہہ کر وہ خاموش ہوگئی
یعنی اسکا مطلب ہے تمھار ا شادی کو کوئی ارادہ نہیں
 
Comments Print Article Print
 PREVIOUS
NEXT 
About the Author: A Waseem Khattak

Read More Articles by A Waseem Khattak: 6 Articles with 5604 views »
It was a beautiful day of November 29, 1978 when I first opened my eyes with my Muslim family and heard the voice calling to prayer saying "ALLAH-O-AK.. View More
23 Jan, 2017 Views: 756

Comments

آپ کی رائے
یہی سب کچھ جب بھائی کی بیوی اس سے چاہے گی اور وہ مانے گا تو جورو کا غلام کہلائے گا اور بھابھی کوئی جادوگرنی ، جس نے ان کے بھائی کو اُلو بنا دیا ۔
By: Rana Tabassum Pasha(Daur), Dallas, USA on Jan, 25 2017
Reply Reply
5 Like
agree with the opinion of rana sahib.............
hmary muashray mein beti or bahoo k liye dohra mayaar rakha jata hai....
khuda hidayat dy hum sb ko. ameen
By: Faiza Umair , Lahore on Jan, 27 2017
2 Like