شکار پور کا باولا کتا اور چونیاں کا درندہ

(Muhammad Anwaar, Lahore)

شکارپور کا باولا کتا، اپنے کاٹنے کی عادت سے تنگ ،شہر چھوڑگیا ۔۔
وقت کی آوارہ گردی اسے چونیاں لے آ ئی
شہر میں ایک دن اسکو ایک درندہ ملا
درندہ اپنی درندگی کے قصے سنانے لگا
کیسے فیضان کو ہوس کا نشانہ بنایا
کیسے فیضان کو موت کے گھاٹ اتارا۔۔
سلمان کی چیخوں کی ہنس ہنس کرنقل اتارنے لگا
حسنین کی معصومیت کے ساتھ اس نے کیسے کھیلا۔۔۔
درندہ ہنس رہا تھا اور
باولے کتے کی آنکھیں تر اور جی کر رہا تھا کہ خود کو ہی کاٹ لے
’’خدایا ، شکر ہے مجھے صرف باولا بنایا ۔۔ قصور کا درندہ نہیں‘‘

 

Comments Print Article Print
 PREVIOUS
NEXT 
About the Author: muhammad anwaar

Read More Articles by muhammad anwaar: 19 Articles with 5615 views »
H m anwaar, more than 15 years experience of TV journalism. Reporting,scripting, copy editing, idea generation, packaging, assignment, worked with Tel.. View More
22 Sep, 2019 Views: 350

Comments

آپ کی رائے