حامد پلیز میرے بچے مجھے واپس کردو۔۔۔صنم ماروی زندگی کے مشکل ترین دور سے گزر رہی ہیں


شادی کا مطلب ہے خوشی ۔۔۔لیکن اگر اس زندگی میں خوشی کا کوئی نام و نشان نہیں بلکہ دکھوں نے ڈیرے ڈال لئے ہیں۔۔۔محبت اور اعتماد کی موت ہو چکی ہے تو پھر اس رشتے کی بھی موت ہو ہی جاتی ہے۔۔۔گلوکارہ صنم ماروی اپنی پروفشینل زندگی میں انتہائی کامیابیاں سمیٹ رہی ہیں لیکن ذاتی زندگی میں انہوں نے بہت تکالیف اور پریشانیاں اٹھائیں اور اٹھا رہی ہیں۔۔۔

صنم ماروی کی اپنے کزن حامد سے یہ دوسری شادی تھی ۔۔۔اور پہلی شادی سے ان کی ایک بیٹی تھی جسے کچھ عرصہ کے لئے سسرال والوں نے اغواہ بھی کیا تھا اور صنم ماروی نے وہ عرصہ بھی انتہائی دکھ اور پریشانی میں گزارا تھا۔۔۔حامد سے شادی 2009 میں ہوئی اور اس شادی سے ان کے تین بیٹے پیدا ہوئے۔۔۔صنم ماروی کے شوہر حامد سے بظاہر تو تمام معاملات صحیح لگتے تھے لیکن ایک فنکار کی آنکھوں میں درد اور تکلیف صرف وہی دیکھ سکھتے تھے جن کو فنکار کی حساسیت کا علم ہوتا ہے۔۔۔شادی شدہ زندگی کے گیارہ سالوں میں حامد کا رویہ صنم کے ساتھ بدلتا گیا۔۔۔یہ وہ حامد تو نہیں تھا جس سے شادی ہوئی اور جو عمر بھر ساتھ نبھانے کی باتیں کرتا تھا۔۔۔اس حامد کے مزاج سے تو صنم کی زندگی میں صرف تلخیاں ہی بھرتی چلی گئیں۔۔۔
 


صنم ماروی نے فروری میں خلع کی اپیل دائر کی اور دعویٰ کیا کہ وہ گیارہ سال کی برداشت کے بعد اب اپنا حوصلہ کھو چکی ہیں اور علیحدگی چاہتی ہیں۔۔۔خلع منظور ہوگئی لیکن اس کا انجام کچھ اچھا نہیں ہوا۔۔۔صنم ماروی کی مامتا کا ایک بار پھر کڑا امتحان شروع ہواگیا۔۔۔وہ بیٹے جنہیں صنم سینے سے لگائے بیٹھی تھی انہیں حامد نے چھین کر اپنے ساتھ رکھ لیا اور پھر سوشل میڈیا پر صنم ماروی نے ایک پوسٹ لگائی جس میں انہوں نے اپنے سابقہ شوہر سے التجا کی کہ ’’حامد پلیز مجھے میرے بچے واپس کردو۔۔۔تم انہیں نہیں سنبھال سکتے۔۔۔ان کے کپڑے تو دیکھو۔۔۔‘‘۔۔۔صنم ماروی کی اس التجا نے سب کے ہی دلوں کو رلا دیا۔۔۔کیونکہ تم عمر بچوں کو ماں سے جدا کرنا ظلم کی انتہا ہے۔۔۔

لیکن صنم کی کوششیں رنگ لائیں اور عدالت نے حامد علی بہلول کے عدالت نا آنے پر اور بچوں کو زبردستی ماں سے جدا کرنے پر اریسٹ وارنٹ جاری کرنے کا حکم دیا۔۔۔صنم ماروی اس خبر سے بے حد سکون میں آئیں اور انہوں نے اپنے فیس بک پر لکھا کہ وہ اب کافی بہتر محسوس کر رہی ہیں کیونکہ فیصلہ ان کے حق میں ہے۔۔۔
 


صنم ماروی اکثر اپنے چھوٹے بیٹے کی ویڈیوز شیئر کرتی رہتی ہیں اور وہ اپنے بچوں کے معاملے میں کسی بھی قسم کی کوتاہی نہیں کرتیں خواہ وہ تعلیم ہو یا ان کے پہنانے اورکھانے کی ذمہ داری۔۔۔دعا ہے کہ وہ جلد اپنے بچوں سے ملیں اور بچوں کے نصیب میں ماں اور باپ دونوں کا پیار شامل رہے۔۔۔

Most Viewed (Last 30 Days | All Time)

Comments

آپ کی رائے
Language: