لاہور ہائیکورٹ کا ملزموں کا ڈیٹا نادرا سے منسلک کرنے کا حکم ‏

لاہور ( 92 نیوز) لاہور ہائیکورٹ نے ڈکیتی و چوری کے مقدمات میں ناقص تفتیش پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے ملزموں کا ڈیٹا نادرا سے منسلک کرنے  اور تفتیش کانظام بہتر کرنیکا حکم دیدیا۔

لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس قاسم خان نے  ملزم ابو بکر ، محمد سرور ، محمد رفیق و دیگر کی درخواستوں پر سماعت  کی ، آئی جی پنجاب عارف نواز رپورٹس سمیت عدالت میں پیش ہوئے  ، جسٹس قاسم خان نے ریمارکس دیے کہ  تفتیشی رپورٹ  لیکر آتا ہے کہ  ملزم ریکارڈ یافتہ ہے ، 100 میں سے زیادہ سے زیادہ 10 مقدمات ایسے ہوں گے جن میں ملزموں کا سابق ریکارڈ ہو گا،باقیوں کا ریکارڈ نہیں ملتا۔

جسٹس قاسم خان نے آئی جی پنجاب سے استفسار کیا کہ  ملزموں  کا ریکارڈ مرتب کرنے کے عمل کو آپ کیسے درست کریں گے ، پکڑے جانیوالا ملزم یہ کہہ دے کہ اس کا نام الف نہیں ب ہے تو آپ کے پاس کیا سسٹم ہے؟۔

سرکاری وکیل نے عدالت کو بتایا کہ  ملزموں کے فنگر پرنٹس اسکین کرنے کا نظام موجود ہے ، جس پر عدالت نےریمارکس دیے کہ  اگر ایسی بات ہوتی تو  گزشتہ 10 روز میں درج ہونے والے لاہور کے مقدمات کا ریکارڈ لیکر آئیں ، حکومت ہر ادارے کا ٹی اے ڈی اے کا بوجھ کم کرے، جدید ٹیکنالوجی سے استفادہ کریں، تفتیشی افسروں کی ٹریننگ کروائیں، ورکشاپس کا انعقاد کروائیں۔

عدالت نے آئی جی پنجاب سے مخاطب ہو کر کہا کہ  محکمے کے سربراہ  کی حیثیت سے آپ کو امن و امان کی صورتحال پر قابو پانا ہو گا، جب ملزموں کو پتہ ہو گا کہ جب وہ پکڑے گئے اور جلد چھوٹ نہیں سکیں گے  تو امن و امان کی صورتحال بہتر ہو گی۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.