پی اے سی نے آئندہ اجلاس میں مشیر خزانہ شوکت ترین کو طلب کر لیا

image

مشیر خزانہ شوکت ترین کو پملک اکاؤنٹ کمیٹی(پی اے سی) نے آئندہ اجلاس میں طلب کر لیا گیا ہے۔

پی اے سی نے اقتصادی رابطہ کمیٹی کے فیصلوں پر تحفظات کا اظہار کیا ہے۔

قومی اسمبلی کے رکن اور مسلم لیگ ن کے رہنما رانا اور پبلک اکاونٹس کمیٹی کے چیئرمین رانا تنویر حسین نے کہا کہ اقتصادی رابطہ کمیٹی میں بعض لوگوں کو فائدہ پہنچایا جاتا ہے، سب سے زیادہ کرپٹ پریکٹس ای سی سی میں ہوتی ہے۔

چیئرمین پی اے سی نے کہا کہ ای سی سی چینی، گندم درآمد یا برآمد کرنے کا فیصلہ کرتی ہے، حکومت ای سی سی کو نیب کے قانون سے نکال رہے ہیں۔

رانا تنویر حسین کا کہنا ہے کہ ہاوس آف لارڈز اور بھارتی پارلیمنٹ کی اکاونٹس کمیٹی کا بھی جائزہ لیں گے۔

انکا مزید کہنا تھا کہ گزشتہ تین سال کے پرنسپل اکاونٹنگ افسر ابھی بھی زندہ سلامت ہیں، جبکہ 2001 والے زیادہ تر افسران ریٹائرڈ یا فوت ہو چکے ہیں۔

چیئرمین پی اے سی نے کہا کہ آڈٹ پیراز کی تعداد جلد ایک لاکھ تک پہنچ جائے گی، پی اے سی کی زیلی کمیٹیوں کے پاس 28 ہزار آڈٹ پیراز زیر التواء ہیں۔

Square Adsence 300X250


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.