سعودی عرب سے 3ارب ڈالر قرض کی منظوری

image
فوٹو: آن لائن

وفاقی کابينہ نے سعودی عرب سے تين ارب ڈالر قرض کی منظوری دے دی جو پاکستان کو آئندہ ہفتے مل جائیں گے۔

وزير اطلاعات و نشریات فواد چوہدری کے مطابق سعودی عرب سے تين ارب ڈالرز ملنے کے بعد ملکی زرمبادلہ کے ذخائر 20 ارب ڈالر ہو جائیں گے۔

گزشتہ روز فواد چوہدری نے اپنی ٹویٹ میں بتایا تھا کہ سعودی عرب سے تین ارب ڈالر کی منتقلی سے متعلق تمام قانونی معاملات طے ہوگئے اور یہ رقم اس ہفتے پاکستان کو مل جائیں گے۔

واضح رہے کہ گزشتہ مہینے وزیراعظم عمران خان کے دورے کے بعد سعودی عرب نے پاکستان کے لیے ایک معاشی پیکج کا اعلان کیا تھا۔

اعلان کے مطابق سعودی ترقیاتی فنڈ غیر ملکی کرنسی کے محفوظ اثاثوں میں سپورٹ اور کرونا وبا سے نمٹنے کے لیے اسٹیٹ بینک آف پاکستان میں 3 ارب ڈالر جمع کروائے گا۔

سعودی عرب کا پاکستان کیلئے 4.2ارب ڈالر کا اعلان

واضح رہے 26 اکتوبر کو سعودی عرب نے پاکستان کو کرونا وبا کی وجہ سے پیدا ہونے والے معاشی بحران سے نمٹنے اور پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر کو سہارا دینے کے لیے چار ارب 20کروڑ ڈالر دینے کا اعلان کیا تھا۔

سعودی ترقیاتی فنڈ نے پاکستان کو سالانہ ایک ارب 20 کروڑ ڈالر مالیت کا تیل دینے اور اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے پاس تین ارب ڈالر جمع کروانے کا اعلان کیا۔

اُس وقت وفاقی وزیر توانائی حماد اظہر نے اپنی ٹویٹ پیغام میں کہا تھا کہ اس تیل کے لیے پاکستان کو فوری طور پر ادائیگی بھی نہیں کرنی ہوگی اور یہ سہولت موخر ادائیگی کی صورت میں دستیاب ہوگی۔

اُن کا کہنا تھا کہ سعودی ترقیاتی فنڈ کے ان اقدامات سے قیمتوں کی عالمی سطح پر اضافے سے پاکستان کی درآمدات اور زرمبادلہ کے ذخائر پر جو دباو پڑا ہے اس سے نمٹنے میں مدد ملے گی۔

 گزشتہ دنوں پاکستان میں ڈالر کی قیمت میں مسلسل اضافہ دیکھنے میں آیا اور ڈالر تاریخ کی بلند ترین سطح 178.30 روپے تک ٹریڈ کیا جس سے درآمدی بل میں بھی اضافہ ہوا۔


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.