بروکولی میں کینسر کے خلاف نہایت مؤثر کیمیکل دریافت

image

جاپانی سائنسدانوں نے دریافت کیا ہے کہ  شاخ گوبھی (بروکولی) میں کینسر ختم کرنے والے طاقتور اجزا موجود ہیں۔

غیر ملکی میڈٰیا رپورٹ کے مطابق پبلک لائبریری آف سائنس (پی ایل او ایس) ون میں ہیروشیما یونیورسٹی کے سائنسدانوں نے ایک نئی تحقیق میں دریافت کیا ہے کہ شاخ گوبھی میں ایک ایسا کیمیکل موجود ہے جو کہ کینسر کے خلاف نہایت مؤثر ثابت ہو سکتا ہے اور اس سے کینسر کے علاج میں مدد مل سکتی ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ شاخ گوبھی غذا کے علاوہ دوا بھی ہے اور مستقبل میں بروکولی یا اس کے اجزا کسی سرطان کش دوا کے لیے بہترین اُمیدوار بھی ثابت ہوسکتے ہیں۔

پبلک لائبریری آف سائنس (پی ایل او ایس) ون میں ہیروشیما یونیورسٹی کے سائنسدانوں نے خمیر(فشن ییسٹ) پر گوبھی کا اہم کیمیکل ڈی آئی ایم یعنی 3,3′-Diindolylmethane آزمایا ہے، یہ قدرتی مرکب خلئے (سیل) کی زندگی مکمل ہونے پر اسے ختم کرتا ہے اور پیچیدہ طریقے سے اس کی باقیات کو ری سائیکل بھی کرتا ہے۔

کینسر میں خلیات اپنی مدت پوری کرکے ختم نہیں ہوتے اور رسولیوں میں ڈھلتے رہتے ہیں جنہیں ہم کینسر ٹیومر کہتے ہیں، تاہم خمیر کے بعد انسانوں پر ڈی آئی ایم کی آزمائش ابھی باقی ہے۔

شاخ گوبھی میں پایا جانے والا ڈی آئی ایم کیمیکل سرطانی خلیات بننے سے روکتا ہے اور آنے والے وقتوں میں کینسر کو ختم کرنے والی دوا میں مؤثر ثابت ہوسکتا ہے۔

یاد رہے کہ اس سے قبل جرمنی کے ماہرین نے بتایا تھا کہ ڈی آئی ایم (ایک خاص کیمیکل) سادہ جانداروں کی زندگی طویل کرسکتا ہے اور یوں اس میں طویل العمری کے خواص بھی پائے جاتے ہیں۔

یاد رہے کہ بروکولی یعنی شاخ گوبھی اب پاکستان میں بھی دستیاب ہے تاہم اسے گھروں میں عام پکوان میں اب تک شامل نہیں کیا گیا البتہ ریستوران وغیرہ میں اس کا استعمال عام ہے۔

Square Adsence 300X250


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
تازہ ترین خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.