درد جدائی .....قسط 29

(Shafaq kazmi, Karachi)

درد جدائی ۔۔۔۔قسط 29۔ ۔۔۔۔مصنفہ شفق کاظمی

نوٹ رائیٹر کی اجازت۔ کے بغیر کہیں پوسٹ کرنا منع ہے

اس کا مطلب عدن خود گئی ہے ۔۔۔۔۔۔۔منیب سی سی ٹی وی فوٹیج دیکھنے کے بعد زیر لب بولا اور اپنے ہونٹ بھینچ لئے ۔۔۔۔۔۔۔ کیوں عدن کیوں گئی تم مجھے چھوڑ کر ۔۔۔۔۔۔۔کیا تمہیں میں اتنا برا لگتا ہوں ۔۔۔کیا تمہیں میرا ساتھ پسند نہیں ہے ۔۔۔۔۔۔منیب دل ہی دل میں عدن سے مخاطب تھا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

سر منیب عدن کی طبعیت ٹھیک نہیں تھی ۔۔۔۔وہ زیادہ دور تک نہیں گئی ہو گی ۔۔۔۔۔۔ یا ہوسکتا ہے اسے راستے میں چکر آگئے ہوں ۔۔۔۔وہ کہیں بے ہوش نہ ہو گئی ہو ۔۔۔۔آپ کو جا کر چیک کرنا چاہیے ۔۔۔ڈاکٹر نے منیب کے کندھے پر ہاتھ رکھ کر کہا ۔۔۔۔۔۔۔۔

میجر احد۔۔۔۔چلو میرے ساتھ ہم راستے میں ڈھونڈھتے ہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔میجر غازان نے میجر احد کو اپنے ہمراہ لیا ۔۔۔۔۔۔

*۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔*
بات سنیں سر کیا آپ نے اس لڑکی کو کہیں دیکھا ہے ؟؟؟ میجر غازان نے راستے میں کسی کو عدن کی تصویر دیکھائی ۔۔۔۔۔۔۔

نہیں بھائی جان میں نے نہیں دیکھا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

کہاں ہو عدن *۔۔۔۔۔۔۔۔* یا اللّه عدن کو اپنے حفظ و آمان میں رکھنا ۔۔۔۔۔۔۔میجر غازان نے دعا کے لئے ہاتھ بلند کئے *۔۔۔۔۔۔*

یار غازان میں نے تو سب کو عدن کی تصویر دیکھا دی ہے ۔۔۔۔۔۔۔ یہاں تو کسی نے بھی نہیں دیکھا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

احد پتہ نہیں عدن کہاں ہو گی ۔۔۔۔۔مجھے بہت فکر ہو رہی ۔۔۔۔۔کیا عدن کو مجھ پر بھروسہ نہیں تھا ؟؟ کیا عدن کو میری محبت پر بھی بھروسہ نہیں تھا ۔۔۔۔۔اسے میرا ساتھ پسند نہیں تھا تو ایک بار بول دیتی ۔۔۔میں خود اس کی زندگی سے بہت دور چلا جاتا ۔۔۔۔۔۔پر کم سے کم وہ تو ایسا نہ کرتی ۔۔۔۔۔۔میجر غازان نے پریشان ہوتے ہوۓ کہا ۔۔۔۔۔۔۔،

اچھا پریشان نہیں ہو ۔۔۔۔ مل جاۓ گی عدن ۔۔۔۔۔،بھائی صاحب سنیں آپ نے اس لڑکی کو کہیں دیکھا ہے ؟ میجر احد نے پاس سے گزرتے ہوۓ کسی آدمی کو روک کے پوچھا ۔۔۔۔۔۔

جی جی میں نے دیکھا ہے ۔۔۔۔ان کو یہ تو وہی لڑکی ہے ۔۔۔۔۔۔۔۔اس آدمی میں عدن کی تصویر کو غور سے دیکھا ۔۔۔۔۔۔اور پھر میجر احد کی طرف دیکھ کر بولا ۔۔۔۔۔۔۔

وہ کون؟؟؟؟ ۔۔۔۔۔۔ آپ نے اس کو دیکھا ہے ۔۔۔۔۔۔کہاں دیکھا ہے پلیز جلدی بتائیں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ریلیکس! !!!!غازان ۔۔۔۔

سر تھوڑی دیر پہلے ان کا ایکسیڈنٹ ہوگیا تھا ۔۔۔۔۔ سیلور رنگ کی گاڑی تھی ۔۔۔۔۔۔۔ پھر وہ گاڑی والے اس لڑکی کو اپنے ساتھ لے گئے ۔۔۔۔۔۔
کیا عدن کا ایکسیڈنٹ ہوگیا ۔۔۔۔۔۔۔میجر غازان نے پریشان ہوتے ہوۓ بولا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

کون تھے وہ لوگ آپ جانتے ہیں ۔۔۔۔۔جو اس لڑکی کو لے کر گئے ۔۔۔۔۔۔۔

سر وہ کہہ رہے تھے ۔۔۔۔۔ کے یہ ہماری بیٹی ہے *۔۔۔۔۔۔۔*

نہیں باس نہیں ہوسکتے ۔۔۔۔۔باس تو ابھی شہر سے باہر ہیں احد ۔۔۔۔۔۔

پھر کون ہو سکتا ہے غازان ۔۔۔۔۔۔

احد چلو میرے ساتھ ۔۔۔۔۔۔ میجر غازان نے میجر احد کا ہاتھ پکڑا اور گاڑی کی جانب لے گیا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

احد کہیں وہ راء کے ایجنٹس تو نہیں جو عدن کو ساتھ لے کر گئے۔۔۔۔۔کیوں کے باس تو شہر سے باہر ہیں اگر وہ باس ہوتے باس ہمیں بتا دیتے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔مجھے لگتا ہے وہ راء کے بندے تھے

ہممممم ہو سکتا ہے ۔۔۔۔میجر احد سوچتے ہوۓ بولے ۔۔۔۔۔۔۔

میں جن سے عدن کو بچا رہا تھا عدن ان کے پاس ہی چلی گئی ۔۔۔۔۔۔۔۔میں عدن کا خیال نہیں رکھ سکا احد۔۔۔۔۔۔۔۔میں نے عدن کو بتایا بھی تھا میں منیب نہیں میجر غازان ہوں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔میں نے اس کو بتایا تھا میں یہ سب کیوں کر رہا ہوں ۔۔۔۔۔پھر بھی وہ مجھے چھوڑ گئی ۔۔۔۔۔۔کیوں ۔۔۔۔۔۔۔۔پتہ نہیں کسی ہو گی کس حال میں ہو گی ۔۔۔۔۔ان درندوں نے کیا حال کیا ہوگا عدن کا ۔۔۔۔۔۔عدن کا ایکسیڈنٹ بھی ہوا ہے ۔۔۔۔۔اس کو چوٹیں بھی لگی ہیں ۔۔.۔۔۔۔۔۔۔۔میجر غازان نے سر پکڑ لیا ۔۔۔۔۔۔۔

غازان جب تم نے عدن کو حقیقت بتائی تھی وہ قومہ میں تھی ۔۔۔۔پلیز یوں بد گماں نہ ہو ۔۔۔۔۔

احد عدن اپنی فیملی سے ملنا چاہتی تھی اس نے مجھے کہا بھی تھا ۔۔۔۔۔۔میں نے کہا ایک بار تم ٹھیک ہو جاؤ میں چھوڑ آؤں گا تمہیں ۔۔۔۔۔۔۔

ہوسکتا ہے غازان وہ اپنی فیملی سے ملنے کے لئے ہی ہسپتال سے نکلی ہو ۔۔۔۔۔۔ پر راستے میں چکر آگئے ہوں اور ایکسیڈنٹ ہوگیا ہو ۔۔۔۔۔بد قسمتی سے وہ راء کے ایجنٹس کی گاڑی کے نیچے آگئی ۔۔۔۔۔۔۔۔
ابھی ویسے بھی کنفرم نہیں ہے عدن کس کے پاس ہے ۔۔۔۔۔پہلے کنفرم ہو جاۓ پھر کچھ کرتے ہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔اٹھو شاباش یوں ہمت نہیں ہارو یوں پریشان ہو گے تو عدن کو واپس کیسے لائیں گے ۔۔۔۔ میجر احد نے میجر غازان کو چوٹھے بچوں کی طرح سمجھایا ۔۔۔۔۔۔۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
یہ کہاں ہوں میں ۔۔۔۔۔یہ کس کا گھر ہے ۔۔۔۔۔۔عدن پریشان ہوگئی ۔۔۔۔۔

ویلکم عدن ڈارلنگ ۔۔!!!!! مبارک ہو آپ کو ہوش آگیا ۔۔۔۔۔۔۔کیسا محسوس کر رہی ہیں اب آپ ؟؟؟ ارجن کمرے میں آیا ۔۔۔۔عدن کو ہوش میں دیکھ کر صوفے پر بیٹھ گیا ۔۔۔۔۔۔۔

کون ہو تم ۔۔۔۔۔ اور ہمت کیسے ہوئی مجھے ڈارلنگ بولنے کی ۔۔۔۔۔۔عدن نے غصے میں گھورتے ہوۓ کہا ۔۔۔۔۔۔۔۔عدن نے بیڈ سے اٹھنے کی کوشش کی ۔۔۔۔۔عدن سے اٹھا نہیں جا رہا تھا ۔۔۔۔۔۔

ارے ارے ۔۔۔۔عدن کیوں اٹھ رہی ہیں بیٹھ جائیں۔۔ آپ تو میجر غازان کی محبت ہیں ۔۔۔۔آپ کی جان بہت قیمتی ہے ہمارے لئے ۔۔۔۔۔۔۔

کیا بکواس کر رہے ہو کون غازان میں کسی غازان کو نہیں جانتی ۔۔۔۔۔۔عدن بہت مشکلوں سے اٹھ کر چلنے لگی ۔۔۔۔۔ارجن نے عدن کی کلائ زور سے پکڑ لی ۔۔۔۔۔۔۔

چھوڑو مجھے بدتمز انسان مجھے درد ہو رہا ہے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ارجن نے عدن کی کلائ چھوڑ کر جیب سے موبائل نکالا ۔۔۔۔۔۔۔اور میجر غازان کی تصویر عدن کو دیکھائی ۔۔۔۔

یہ دیکھو میجر غازان ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

منیب ۔۔۔۔۔۔عدن نے زیر لب منیب کا نام لیا ۔۔۔۔۔۔

یہ منیب نہیں غازان ہے ۔۔۔۔میجر غازان ۔۔۔۔۔۔۔۔۔اور ہم راء کے ایجنٹس ہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔اس نے ہماری اہم فائل آئی ایس آئی کو دے دی ۔۔۔۔۔۔جس میں ہمارے راز تھے ۔۔۔۔ہمیں خبر ملی تھی کے تم شاپنگ مال جاوّ گی اور ہم اس دن تمہیں شاپنگ مال سے کڈنیپ کرنا چاھتے تھے تاکہ ہم ان کو بلیک میل کر سکیں اور وہ فائل واپس لے سکیں ۔۔۔۔۔پر پتہ نہیں یہ خبر کیسے میجر غازان تک پہونچ گئی اور وہ شاپنگ مال پہنچ گیا ۔۔۔۔۔تمہیں وہاں سے لے گیا ۔۔۔۔۔۔۔۔بولنے والے نے تو بہت آسانی سے بول دیا تھا لیکن عدن کے پیروں تلے سے زمین نکل گئی تھی ۔۔۔۔۔۔عدن کی آنکھوں کے سامنے وہ منظر آنے لگا ۔۔۔۔۔۔۔جب منیب کہتا تھا ۔۔۔۔۔عدن جس دن تمہیں سچائی پتہ چل جاۓ گی میں یقین سے کہتا ہوں ۔۔۔۔۔تم مجھ سے پھر نفرت نہیں کرو گی ۔۔۔۔۔۔۔،اس کا مطلب منیب مجھے ان درندوں سے بچا رہا تھا ۔۔۔۔۔۔ یا اللّه یہ میں نے کیا کر دیا ۔۔۔۔۔۔منیب۔۔۔۔۔۔۔۔منیب مجھے ۔۔۔۔مجھے معاف کردو ۔۔۔۔۔۔میں نے تمہارے ساتھ بہت غلط کیا ۔۔۔۔۔۔۔۔میں تمہیں سمجھ نہیں سکی ۔۔۔۔۔،

۔....................
کیا بات ہے ٹاٸیگر ۔۔۔۔؟ طبیعت تو ٹھیک ہے تمہاری ۔۔۔۔بلیک ٹاٸیگر کی سرخ آنکھیں دیکھیں تو پوچھنے لگی ۔۔۔بلیک ٹاٸیگر سر جھکا کر ایک ہاتھ سے اپنی پیشانی مسل رہا تھا ۔۔۔اور چہرے پر چٹانوں جیسی سختی تھی ۔۔۔بلیو کیٹ اٹھ کر ٹاٸیگر کے پاس آٸ اس کے مضبوط ہاتھ پر اپنا ہاتھ رکھ کر دوبارہ پوچھا ۔۔۔ٹاٸیگر کیا ہوا میں پوچھ رہی ہوں۔۔سب ٹھیک تو ہے ناں ۔۔۔۔۔ٹاٸیگر اسی پوزیشن میں بیٹھا رہا ۔۔۔ٹاٸیگر کچھ پوچھ رہی ہوں ۔۔۔ٹھیک تو ہو ناں تم ۔۔۔میں ٹھیک ہوں بلیو کیٹ ۔۔۔بس تھک گیا ہوں ۔۔۔تم بیٹھ جاٶ ۔۔۔۔۔نہیں تم بتاٶ مجھے ۔۔۔۔۔نہیں تو تم جانتے ہو ۔۔میں یہاں نہ بییٹھوں گی نہ ہی یہاں سے جاٶں گی ۔۔۔۔یہ مت بھولو ۔۔۔ہم اچھے دوست بھی ہیں ۔۔۔تمہیں کوٸ مسٸلہ ہے تو پلیز مجھے بتاٶ ۔۔۔۔بات ہی کچھ ایسی ہے ۔۔۔۔تمہیں پتہ ہے باس کی بیٹی کڈنیپ ہوگٸ ہے ۔۔۔اور اس اغوا میں کس کا ہاتھ ہے ۔۔۔اور اس گیم کا ماسٹر ماٸنڈ کون ہے ۔۔۔تمہیں پتہ چل گیا تو تمہارا بھی یہی حال ہو گا ۔۔۔۔۔
بلیو کیٹ چونک گٸ اور ٹاٸیگر کی طرف ساکت نظروں سے دیکھنے لگی ۔۔۔۔
ٹاٸیگر کچھ بھی بولے بغیر بلیو کیٹ کا ہاتھ پکڑے اسے آپریشن روم میں لے آیا ۔۔۔۔
بلیو کیٹ نے یہاں آکر جو سنا اور دیکھا تھا ۔۔۔۔۔اس کی ٹانگوں سے جان نکل گٸ تھی ۔۔۔۔۔تو اس سے پہلے میجر ہارون اورکیپٹن علیزے کو جس بے دردی سے شہید کیا گیا تھا۔۔۔۔وہ تو بے خبری میں ہی چلے گۓ ۔۔۔۔وہ نہیں جانتے تھے ۔۔۔۔کہ ان کی ماں کا اپنابیٹا ہی غداروں کی صف میں شامل ہو گیا ہے ۔۔۔بلیو کیٹ کی آنکھوں سے آنسو بہہ رہے تھے ۔۔۔۔۔ٹاٸیگر کی آنکھوں میں اتری لہو کی سرخی چیخ چیخ کر اعلان کر رہا تھا ۔۔۔۔منزل قریب ہی ہے ۔۔۔۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔
یہ رونے کا وقت نہیں ہے ۔۔۔۔سوچو کہ کرنا کیا ہے ۔۔۔ٹاٸیگر مضبوط لہجے میں بولاتھا۔۔۔ت۔۔۔۔تت۔۔۔۔تم نے میجر غزان کو بتایا وہ اپنے آنسو پیتے ہوۓ بولی تھی ۔۔ان کا کام ہی ایسا تھا ۔۔۔۔کہ انہیں اپنی زندگیوں کی پرواہ ہی نہیں تھی ۔۔۔۔۔
۔ان کا مقصد ان کی زندگیوں سے بھی زیادہ اہم تھا۔۔۔۔وہ لمحے کیسے بھول سکتی تھی کیٹ نٹ کھٹ اور شرارتی علیزے اس کے روم میں آٸ تھی اور آتے ہی اس کے گلے لگ گٸ تھی ۔۔۔۔یار کیٹی تجھے پتہ ہے ۔۔۔۔۔ہارون نے مجھے پرپوز کیا ہے ۔۔۔وہ اپنا رنگ والا ہاتھ اس کو دکھاتے ہوۓ بولی تھی ۔۔۔اور وہ کہتا ہے ۔۔۔علیزے انکار مت کرنا ۔۔جیسے ہی مشن مکمل ہوگا ۔۔میں اپنی ماما کو بھیجوں گا ۔۔۔اور تمہیں ہمیشہ کیلۓ اپنا بنا لوں گا ۔۔۔۔علیزے شرم سے سرخ پڑتے ہوۓ اسے بتا رہی تھی ۔۔۔اس لمحے وہ اتنی حسین لگ رہی تھی کہ ؟کیٹ کو اپنی نظریں ہٹانے پڑیں تھی اس کے چہرے سے ۔۔۔۔لیکن اس سے اگلے دن ہی ۔۔۔ہارون دلہے کے اور علیزے دلہن کے روپ میں سی ایم ایچ لاۓ گۓ تھے ۔۔۔اس سے آگے کیٹ کچھ نہ سوچ سکی ۔۔۔۔۔ ۔۔ اوراپنے بہتے آنسو صاف کرنے لگی ۔۔۔۔۔
وہ بس پہنچنے ہی والے ہیں۔۔انہوں نے ہی کہا تھا کہ تمہیں بھی بلا لوں ۔۔۔ٹاٸیگر کیٹ کو پانی کا گلاس تھماتے ہوۓ بولا

(جاری ہے )
 

Rate it:
Share Comments Post Comments
Total Views: 445 Print Article Print
About the Author: Shafaq kazmi

Read More Articles by Shafaq kazmi: 54 Articles with 14673 views »
میرا نام شفق کاظمی ہے ۔۔۔۔میں کراچی سے ہوں ۔۔۔۔آپ لوگ مجھ سے دیئے گئے لنک پر بھی رابطہ کر سکتے ہیں
https://www.facebook.com/ش-ف-ق-913954255608489/
.. View More

Reviews & Comments

Is pic wale captain ki full pic hai .?
By: Hira, Fsd on Nov, 28 2019
Reply Reply
0 Like
Uffff yeh pic wala fojiii
By: Noor , Hyd on Nov, 28 2019
Reply Reply
0 Like
Zabardast story ....
By: Aimen, Peshawar on Nov, 28 2019
Reply Reply
0 Like
Story bhoat aalaa hai ar haae yeh handsome foji
By: Meerab, Islamabad on Nov, 28 2019
Reply Reply
0 Like
Pic wala foji bhout handsome hai
By: Zaina, Lahoore on Nov, 28 2019
Reply Reply
0 Like
Language: