ا قتبا س

(naila rani, karachi)

علم حا صل کر نا ہر مسلما ن عورت مرد پر فر ض ہے “ تو علم کی طلب جسطر ح مرد کے لیئے لا ز می ہے اسی طر ح عورت کے لیئے بھی لا زمی ہے بلکہ یہ دا جز تو یو ں کہتا ہے کہ اگر کسی آ دمی کے دو بچے ہو ں -ایک بیٹا اور ایک بیٹی اور اس کے و سا ئل ا تنے ہو ں کہ دو نو ں میں سے کسی ایک کو تعلیم د لوا سکتا ہے تو اسکو چا ہیئے کہ وہ بیٹی کو تعلیم پہلے د لوا ئے اس لیئے کہ “ مرد پڑھا فرد پڑ ھا ،عو رت پڑ ھی خا ندا ن پڑ ھا “ جب عو ر تو ں میں د ینی تعلیم عا م ہو گی تو پھر آ ئیدہ نسلو ں کی تر بیت ا چھی ہو گی بلکہ آ پ غور کر یں تو اس ا مت کے ہر کا میا ب مرد کے پیچھے آپ کو عورت کا کردار نظر آ ئے گا کبھی بیو ی کی شکل میں ،کبھی بہن کی شکل میں ، کبھی ما ں کی شکل میں اور کبھی بیٹی کی شکل میں ۔۔۔۔۔۔۔ از ا فا دات ۔۔۔۔۔

(حضر ت مو لا نا پیر حا فظ ذو لفقار ا حمد نقشبندی مجددی مد ظلہ ۔۔۔۔کتا ب سکو ن دل )

Comments Print Article Print
 PREVIOUS
NEXT 
About the Author: naila rani riasat ali

Read More Articles by naila rani riasat ali: 104 Articles with 110439 views »
Currently, no details found about the author. If you are the author of this Article, Please update or create your Profile here >>
28 Sep, 2016 Views: 606

Comments

آپ کی رائے