اور محبت ہار گئی

(Masood Chaudhery, lahore)
ایک جزیرے پر تمام احساسات محبت کی سربراہی میں رہتے تھے
ایک دن محبت کو اطلاع ملی کہ ایک بہت بڑا طوفان آنے والا ہے جس میں
سب کچھ بہہ جائے گا
اس نے ایک کشتی تیار کروائی اور سب کو اس میں سوار کر دیا .
دریں اثناء
محبت کو معلوم ہوا کہ سوائے انا کے سبھی کشتی پر سوار ہیں.
محبت انا کے پاس گئی اور اس سے کشتی پر ساتھ چلنے کی التجاء کی
لیکن انا نہیں مانی
طوفان بڑھا, کشتی والے بچ گئے
جزیرہ ڈوب گیا اور ساتھ ہی ,
محبت انا کو مناتی مناتی طوفان میں غرق ہو گئی
Comments Print Article Print
 PREVIOUS
NEXT 
About the Author: Masood Chaudhery
Currently, no details found about the author. If you are the author of this Article, Please update or create your Profile here >>
14 Oct, 2016 Views: 673

Comments

آپ کی رائے
beautifully describesd.... stay blessed!!!
By: Faiza Umair, Lahore on Oct, 17 2016
Reply Reply
0 Like
Very nice
By: Rania Ch, Lahore on Oct, 17 2016
Reply Reply
0 Like