بکری اور پردہ

(Muhammad Arshad Qureshi (Arshi), Karachi)
وہ کسی کام کے سلسلے میں پاکستان آیا تھا گو کہ مسلمان نہیں تھا لیکن اسلام میں پردے کے بارے میں بہت کچھ سنا تھا وہ راستے میں دیکھی ان بکریوں کا بار بار ذکر کرتے ہوئے پاکستانی معاشرے میں پردے کی تعریف کر رہا تھا جن کے تھنوں پر کپڑے کی تھیلی بندھی ہوئی تھیں ،اسے کیا خبر کہ یہ پردہ نہیں بلکہ بکری کا دودھ اس کا بچہ نہ پی لے اور مالک کے بچے کو دودھ نہ ملے اس لیے باندھی گئی تھیں۔ میں خاموش اور خوفزدہ تھا کیوں کہ اب ہم شہر کی حدود میں داخل ہوچکے تھے۔
Comments Print Article Print
 PREVIOUS
NEXT 
About the Author: Muhammad Arshad Qureshi

Read More Articles by Muhammad Arshad Qureshi: 127 Articles with 79959 views »
My name is Muhammad Arshad Qureshi (Arshi) belong to Karachi Pakistan I am
Freelance Journalist, Columnist, Blogger and Poet.​President of Internati
.. View More
21 Oct, 2016 Views: 550

Comments

آپ کی رائے