لاشوں کی سیاست

(Tughral Farghan, Hyderabad)
سو لفظی کہانی
" مجھے ہر قیمت پر لاشیں چاہئیں ورنہ ہماری سیاست ختم ہو جائیگی۔"
" ہم کوشش کر رہے ہیں مگر پولیس فائر نہیں کر رہی۔"
" تم پیچھے سے فائر کرو بندے مارو، الزام پولیس پر، جیسا بڈھے نے کیا تھا۔"
"تب پولیس کے پاس گنیں تھیں جبہی انکو الزام تراشی کا موقع ملا یہاں تو نرے ڈنڈے لیکر آ گئے ہیں۔"
" تم ڈنڈے لیکر شدت سے حملہ کرو، شاید کوئی لاش گر ے۔"
ٹررررن ٹرررن
"ہیلو، قاسم بیٹا کیسے ہو؟"
"سلیمان اور ٹیرن کا کیا حال ہے؟"
" احتیاط سے باہر نکلا کرو کہیں کوئی نقصان نہ پہنچ جائے تمہارے جسموں پر میں ایک خراش بھی برداشت نہیں کر سکتا۔"
Comments Print Article Print
 PREVIOUS
NEXT 
About the Author: Tughral Farghan

Read More Articles by Tughral Farghan: 13 Articles with 7690 views »
Currently, no details found about the author. If you are the author of this Article, Please update or create your Profile here >>
30 Oct, 2016 Views: 663

Comments

آپ کی رائے
ٹیریان کو اس نے بیٹی ابھی تسلیم نہیں کیا.اس کا نام نہ لکھیں
By: Muhammad Ameer Umar Farooq, Muzaffar garh on Nov, 02 2016
Reply Reply
0 Like
زبردست بھائی جان ، بہت خوب
اللہ کرے زور قلم اور زیادہ
By: Ibrahim , Karachi on Nov, 02 2016
Reply Reply
0 Like