عمران کا نیا پاکستا ن ملاحظہ ہو۔

(Syed Abuzar Shah, Lahore)

پاکستان تحریک انصاف اور عمران کا نیا پاکستان
چند ہفتوں کے دوران پی ٹی آئی کو خیر باد کہنے والی سرگرم خاتون کارکنان ناز بلوچ اور عائیشہ گلالئی کے جانے سے واقعی تحریک انصاف کو ایک وقتی جٹکا ضرور لگا ہوگا ۔ لیکن شکر ہے کہ بہت جلد یعنی نیا پاکستان کے بننے سے پہلے عمران خان نیازی کے نیا پاکستان کا ایک جھلک پاکستانی عوام نے دیکھ لیا ۔عائیشہ گلالئی سے پہلے پی ٹی آئی چھوڑنے والی ناز بلوچ نے تو ایسے کوئی انکشافات نہیں کئے ۔لیکن عائیشہ گلالئ نےتو عمران خان نیاز ی کی ظرف کےمطابق وہ کرتوت قوم کے سامنے آشکار کردئے جو وہ جوانی سے جس کے لئے مشہور ہے - ۔ شکر ہے اللہ کا کہ یہ الزامات کسی نون لیگی نے نہیں لگا ئے ورنہ اس کا تو عمران اور اس کے پالتو کتورے ماں بہن ایک کر لیتے ۔ عائیشہ گلالئی نے جو الزامات لگائے ہیں ۔ میں یقین بلکہ پاکستانی عوام اس کو سو فی صد درست مانیں گے ۔کیونکہ عمران کی زندگی کا ایک ایک لمحہ اور منہ سے نکلا ہوا ایک ایک لفظ پاکستانی آئین کے آرٹیکل باسٹھ اور تریسٹھ سے متصادم ہوتا ہے ۔ خدا کی قسم مجھے عمران کی اسلامی جمہوریہ پاکستان کے وزیر اعظم بننے کے خواب دیکھنا عجیب سا لگتا ہے ۔ میں کہتا ہوں کہ پاکستانیوں کے مذہب میں جس کی سزا سنگھسار اور پھانسی بنتی ہے ۔ کچھ بے وقوف اس کو ملک کا وزیر اعظم بننے کے خواب دیکھ رہے ہیں۔ عائیشہ گلالئی نے جو کچھ کہا ہے وہ سو فی صد درست ہوگا اس لئے کہ اس پر یہ سب کچھ بیتی ہوگی ۔ عمران خان نیاز ی نے ناز بلوچ کے بارے میں کہا تھا ، کہ شکر ہے کہ چلی گئی ۔ ہمارے کسی کا م کی نہیں تھی ۔ نیازی صاحب کا مطلب وہی تھا جو عائیشہ نے اس کا ذکر کیا ہے ۔ خیر جو بھی ہے ریحم کی وہ الفاظ بھی اب مجھے یا د آرہی ہے کہ عمران نیازی کی نظر میں عورت ذات کی کوئی عزت نہیں۔ عمران کو ہر عور ت سیتا وائیٹ اور جمائمہ کی طرح نظر آتی ہے ۔ لیکن یہ سچ بھی ہے اوراس کو نظر بھی آنی چاہئے کیونکہ عورت جب عہدے یا کسی اور لالچ میں غیر مرد اور وہ بھی جنسی مستندآوارہ ہو ۔کے پاس بے تکلف ہوکر جاتی ہے ۔ بغیر کسی محرم کے اس کےساتھ تین سو کنا ل کے محل میں اکیلی راتیں گزارتی ہیں ۔ تو ظاہر ہے وہ بھی ایک مرد ہے اور وہ بھی مدر پدر آزاد معاشرے کا پر وردہ ۔ اس میں نیازی کا کوئی گناہ نہیں ۔ گناہ اس والدین اور سرپرستوں کی ہے جو اپنی جوان بچیوں کو اس طرح کی جنسئ بھیڑیو کے پاس بھیجتی ہیں ۔او ر اپنی عزتیں اس قسم کے بدکردار لوگوں کے ہاتھوں لٹاتی ہیں ۔ خیر عزت اور ان عورتوں کے پاس کہاں ہوتی ہےجو غیر مردوں کے ساتھ مل جل کر خوش رہتی ہیں ۔ عمران کی جنسی آوارگی کی تعفن لاس انجلس سے لے کر اسلام آباد کے بنی گالا جیسے بدنام زمانہ قحبہ خانے تک پھیلی ہو ئی ہے ۔ اب آگے آگے دیکھیں ہوتا ہے کہا ۔ نادیہ خٹک اور چند ایک اور عورت نما عمرانی رکھیل کب عمران کی جنسی آوارگی کےبارے میں انکشافات کرتی ہیں ہمیں انتظار رہےگا ۔ انشا اللہ یہ ننگ دھڑنگ جنسی آوارہ بہت جلد اپنے ہی ساتھیوں کے ہاتھوں ذلیل ہوگا ۔ اور اس کا نام پاکستان کی تاریخ کے اوراق میں انتہائی میلی سیاہی سے رقم ہوگا ۔ اس نے شریفوں کی پگڑیاں اچھالی ہیں ۔ یہ بھی ننگا ہوکر رہے گا ۔ ایم این اے جمشید دستی کا مشہور قول ہے کہ اگر عمران کا حکومت آیا تو بہن بھائی کی نکاح جایز ہوجائگی ۔ اور ڈاکٹر عبدالقدیر خان کا قول ہے کہ عمران کی وزیر اعظم بننے سے تبدیلی نہیں کچھ اور آئے گا

Comments Print Article Print
 PREVIOUS
NEXT 
About the Author: Syed Abuzar Shah
Currently, no details found about the author. If you are the author of this Article, Please update or create your Profile here >>
01 Aug, 2017 Views: 211

Comments

آپ کی رائے