کرکٹ٬ نئے قوانین اور کھلاڑی کے لیے ریڈ کارڈ

آئی سی سی 28 ستمبر 2017 سے کرکٹ کے کھیل میں دو نئے قانون متعارف کروانے جارہے ہیں- کرکٹ کے کھیل میں متعارف کروائے جانے والے ان نئے قوانین کے تحت ایک تو بلے کی حجم میں مسابقت جانچی جائے گی اور دوسرا کرکٹ کے کھلاڑیوں کو بھی خراب رویے کا اظہار کرنے پر ریڈ کارڈ دکھایا جاسکے گا-
 


ان نئے قوانین کا اطلاق سب سے پہلے پاکستان اور سری لنکا کے مابین ہونے والی ٹیسٹ سیریز اور جنوبی افریقہ بمقابلہ بنگلہ دیش کے درمیان کھیلے جانے والے ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں کیا جائے گا-

ریڈ کارڈ دِکھا کر کھلاڑی کو ان صورتوں میں میچ سے باہر کیا جا سکے گا جب کھلاڑی امپائر کو دھمکی دے٬ امپائر یا ساتھی کھلاڑی پر حملہ کرے یا پھر جانی نقصان پہنچانے کی کوشش کرے گا-

کرکٹ کے دوسرے نئے قانون میں بلے کے سائز کی جانچ کی جائے گی- اس قانون کے مطابق بلے کے سروں کی موٹائی 40 ملی میٹر سے زیادہ نہیں ہونی چاہیے جبکہ بلے کے مرکزی حصے کی موٹائی 67 ملی میٹر سے زائد نہ ہو-

بلے کے سائز کی جانچ کے لیے امپائرز کو ایک نیا آلہ فراہم کی جائے گا جس کی مدد سے وہ دیکھ سکیں گے کہ کھیل میں استعمال کیا جانے والا بلا کرکٹ قوانین کے مطابق ہے یا نہیں-
 


اس کے علاوہ بھی کرکٹ کے کھیل میں چند تبدیلیاں کی گئی ہیں جیسے کہ اب اگر بلے باز کی جانب سے ہِٹ کی جانے والی گیند کو فیلڈر یا کیپر اپنے ہیلمٹ سے ٹکرانے کے بعد بھی کیچ کریں گے تو بھی بلے باز کو آؤٹ قرار دیا جائے گا-
Most Viewed (Last 30 Days | All Time)
25 Sep, 2017 Views: 3102

Comments

آپ کی رائے
The International Cricket Council (ICC), in a press release on Tuesday, has announced a number of changes to its playing conditions which will be effective in all series starting September 28 or later.