پاکستان اور بھارت کے درمیان تیسرے فریق کی طرف سے مصالحت ہی واحد آپشن ہے، وزیر خارجہ

اسلام آباد: (11 ستمبر 2019) وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ بھارت کی موجودہ حکومت آر ایس ایس کے ایجنڈے پر عمل پیرا ہے۔ بھارت کو مذاکرات کی پیشکش کی لیکن کوئی مثبت جواب نہیں ملا۔ بھارت بارباراپنی پوزیشن تبدیل کررہاہے۔ پاکستان اور بھارت کے درمیان تیسرے فریق کی طرف سے مصالحت ہی واحد آپشن ہے۔

سوئس ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے مقبوضہ جموں و کشمیر میں موجودہ صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ یورپی یونین کے ممالک صورتحال کی نزاکت کو سمجھتے ہیں لیکن سیاسی وجوہات پر آواز نہیں اٹھارہے۔ بھارت نے پانچ اگست کو جو اقدام کیا وہ سب کیلئے حیران کن تھا۔ بھارت کی اپوزیشن جماعتوں نے ان اقدامات کے خلاف آواز اٹھائی، بھارت کو بین الاقوامی قوانین اور اقوام متحدہ کی قرارداروں پر عملدرآمد کرنا ہوگا۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مستقبل قریب میں دوطرفہ مذاکرات کی کوئی صورت نظر نہیں آرہی۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ بھارت فوری طور پر مقبوضہ جموں و کشمیر سے کرفیو اٹھائے۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ ملٹری آپشن افغانستان کے مسئلے کا حل نہیں۔ طالبان اپنا ذہن اور سوچ رکھتے ہیں۔ ہم نے خطے میں قیام امن کیلئے مصالحانہ کردارادا کیا۔ مذاکرات کو بحال ہونا چاہیے کیونکہ اس طرح انٹرا افغان مذاکرات کی راہ ہموار ہوگی۔

انہوں نے مزید کہا کہ طالبان کا مذاکرات کی میز پر آنا، القاعدہ اور آئی ایس ایس سے لاتعلقی کا اظہار کرنامثبت پیشرفت ہیں۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.