بیگم یہ ہے ہی چیز ایسی

(Mukhtar Ahmed, Islamabad)

بچے ماں باپ کی بھی نہیں سن رہے تھے- دادی ماں نے فیصلہ کیا کہ اب یہ مسلہ ان کے دادا ابّو کے سامنے رکھیں گی جن سے دادی ماں کے علاوہ پورا گھر ڈرتا تھا- رات کو وہ انھیں بچوں کے کمرے میں لے گئیں- تمام بچے اپنے قد سے بڑے موبائل کھولے بیٹھے تھے- "انہیں سمجھائیے ہر وقت موبائلوں میں لگے رہتے ہیں"- انھیں دیکھ کر بچے سہم گئے اور موبائلوں کو چھپانے لگے- دادا ابّو بچوں کے پاس ہی بیٹھ گئے، جیب سے موبائل نکالا اور بولے "بیگم یہ ہے ہی چیز ایسی ان کو کیا سمجھائیں"-

Rate it:
Share Comments Post Comments
Total Views: 201 Print Article Print
About the Author: Mukhtar Ahmed

Read More Articles by Mukhtar Ahmed: 59 Articles with 33353 views »
Currently, no details found about the author. If you are the author of this Article, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language: