بالوں کو بچانے کے کامیاب ترین آزمودہ ٹوٹکے

موسم بدلتے ہی سب سے زیادہ نقصان ہوتا ہے جلد اور بالوں کا۔۔۔جلد کو تو واپس لایا جا سکتا ہے لیکن بال اگر ایک بار پتلے ہوجائیں تو ان کو لانا کافی مشکل ہوجاتا ہے۔۔۔یہ بال صدیوں سے حسن کی پہچان سمجھے جاتے ہیں اور ان کی دیکھ بھال کے لئے ہر دور میں باقاعدہ محنت اور کوشش کی جاتی تھی۔۔۔جن کے گھر میں دادی نانی آج بھی ساتھ ہیں وہ ان کے بالوں کی صحت دیکھ کر اندازہ لگا سکتے ہیں کہ بڑھاپے میں بھی ان بالوں میں زندگی آج کی نوجوان لڑکیوں سے کہیں زیادہ ہے۔۔۔تو کیوں نا آزمائیں وہ کامیاب ٹوٹکے جو ان بالوں کو گارنٹی کے ساتھ مضبوط، گھنا اور لمبا کر سکے۔۔۔
 


پہلا ٹوٹکہ گرتے ہوئے بالوں کو بچانا
سب سے پہلے آپ نے اپنے گرتے بالوں کو بچانا ہے۔۔۔انہیں ان کے گھر یعنی اپنے سر پر واپس لانا ہے۔۔۔اور اسکے لئے حاضر ہے ایک جاندار ٹوٹکہ۔۔۔دو عدد انڈے لیں اس میں ایک چمچہ خالص مہندی، پسی ہوئی لونگ، کلونجی، اور ایک چمچہ دہی میں ملا کر سر پر لگا لیجیئے۔۔۔پھر تین سے چار گھنٹے کے لئے اسے کسی تولئے سے ڈھک کر بیٹھ جائیں ۔۔۔اور بعد میں ہلکے پی ایچ والے شیمپو سے سر اچھی طرح دھو لیں۔۔۔یہ عمل مہینے میں تین سے چار بار دہرائیں اور گرتے ہوئے بالوں کو واپس لے آئیں۔۔۔
 


دوسرا ٹوٹکہ گنج پن اور ٹوٹے ہوئے بالوں سے بچانا
بالوں میں کئی جگہ سے گنج پن آجاتا ہے اور بال کچھ جگہ سے بالکل پتلے اور کچھ جگہ سے صحیح حالت میں ہوتے ہیں، اور بال کہیں کہیں سے ٹوٹے ہوئے لگتے ہیں۔۔۔اس ٹوٹکے میں آپ سبز چائے کی پتی کو لہسن ، ادرک اور پیاز کے رس میں ملا کر صرف دس منٹ مساج کریں۔۔۔اور آدھے گھنٹے بعد ہی سر دھولیں۔۔۔یہ عمل ہر تین سے چار دن بعد دہرائیں۔۔۔اور کمال دیکھیں۔۔۔

تیسرا ٹوٹکہ بال لمبا کرنے کے لئے
اگر آپ چند ہی دنوں میں اپنے بال لمبے کرنا چاہتے ہیں تو پندرہ گرام املی رات کو ایک کپ پانی میں بھگو دیں۔۔۔صبح اس کی گٹھلیاں نکال کر پھینک دیں اور گودے کو اچھی طرح ہاتھ سے مسل لیں۔۔۔اس میں ایک چمچہ بادام کا تیل اور ایک چمچہ کھوپرے کا تیل مکس کریں۔۔۔اس مکسچر کو اچھی طرح اپنے سر پر مساج کریں۔۔۔صرف ایک ہفتہ استعمال سے ہی بالوں میں آپ کو واضع فرق نظر آئے گا۔۔۔املی جلد اور بالوں دونوں کے لئے ہی حیرت انگیز فوائد کا مجموعہ ہے۔۔۔
 


ساتھ ہی اگر آپ چاہتی ہیں کہ آپ کے بال تیزی سے لمبے ہوں تو ہر دس دن بعد انگشت برابر انہیں کاٹ لیا کریں تاکہ بالوں میں نوکیں نا بنیں اور وہ ایک برابر رہیں۔،۔۔۔یہ نسخہ بھی صدیوں پرانا ہے۔۔۔آزما کر دیکھئے۔۔

Rate it:
Share Comments Post Comments
Total Views: 2102 Print Article Print

YOU MAY ALSO LIKE:

Reviews & Comments

Language:    
It doesn’t matter if you have curly hair, thin hair, oily hair, dry hair, or any other type of hair—certain hair care tips are universal. While you may want to tailor your routine to your hair type, the basics of hair care are just as important to know—if not more so.