برگر میں صرف کباب نہیں بلکہ۔۔۔۔ تھا، برگر میں سے ایسا کیا نکل آیا کہ سوشل میڈیا پر وائرل ہو گیا

 
کھانے پینے کے شوقین افراد بہترین سے بہترین ذائقے اور کوالٹی کے لیے نہ صرف گھر سے باہر مختلف جگہوں کا کھانا ٹرائی کرتے ہیں بلکہ اس کے ساتھ ساتھ اپنے دوستوں اور گھر والوں کو بھی ایسی جگہوں پر جانے کی تجاویز بھی دیتے نظر اتے ہیں اور یہی فیڈ بیک کسی بھی کھانے پینے کی برانڈ کی شہرت اور کامیابی کا سب سے بڑا ذریعہ ہوتا ہے-
 
مگر بعض اوقات کچھ ایسے واقعات بھی ہوتے ہیں جن کی وجہ سے اچانک ایسے واقعات ہو جاتے ہیں جو کہ کسی بھی ادارے کی شہرت کو لمحوں میں خاک میں ملا دیتے ہیں ایسا ہی ایک واقعہ حالیہ دنوں میں جنوبی امریکہ کے ایک ملک بولیویا میں پیش آیا-
 
بارہ ستمبر کو یہ واقعہ ایک بولیوین خاتون کے ساتھ پیش آیا جب کہ وہ اپنی دوست کے ساتھ لنچ کے لیے ہاٹ برگر کے ایک فاسٹ فوڈ سنٹر میں لنچ کے لیے گئی اور اس نے کھانے کے لیے برگر کا آرڈر دیا-
 
 
برگر کا پہلا بائٹ لیتے ہی اسے ایک اجنبی سا احساس ہوا جب اس نے برگر کو کھول کر دیکھا تو اس پر یہ انکشاف ہوا کہ اس کے برگر میں کسی انسانی ہاتھ کی کٹی ہوئی گلی سڑی ہوئی انگلی موجود ہے۔ یہ انگلی اس کے ناخن سے پتہ چل رہا تھا کہ کسی عورت کے ہاتھ کی انگلی ہے-
 
اس خاتون نے اس برگر اور انسانی ہاتھ کی انگلی کے ساتھ تصویر کو اپنے اکاؤنٹ سے شئير کرتے ہوئے لکھا کہ کھانے کے دوران میں نے انگلی کو بھی چبا ڈالا۔ اس حوالے سے جب اس نے انتظامیہ سے شکایت کی تو انتظامیہ کا کہنا تھا کہ اس کے بدلے میں آپ کو جو بھی چاہیے آپ ہمیں بتائیں ہم ہر قسم کا نقصان بھرنے کے لیے تیار ہیں-
 
انتظامیہ کا اس حوالے سے یہ بھی کہنا تھا کہ یہ برگر تیار شدہ حالت میں باہر سے منگوايا گیا تھا اور اسکی تیاری ان کے سینٹر میں نہیں ہوئی تھی۔ اور ماضی میں ان کے ادارے کے حوالے سے ایسی کوئی بھی شکایت موجود نہیں تھی۔
 
 
جب اس عورت کی لگائی گئی یہ فیس بک پوسٹ تیزی سے وائرل ہوئی تو کمپنی نے اس سارے واقعے کو ادارے کی بدقسمتی قرار دیا اور مزيد وضاحت پیش کرتے ہوئے کہا کہ حادثاتی طور پر اس برگر کی تیاری کے دوران کام کرنے والی ایک خاتون کی انگلی کٹ کر اس میں شامل ہو گئی-
 
جب اس واقعے کی خبر بولیویا کے سرکاری حلقوں تک پہنچی تو ان کے منسٹر آف کنزيومر رائٹ نے اس پر ایکشن لیتے ہوئے اس ریسٹورنٹ کو نہ صرف سیل کر دیا بلکہ مزید انتطامات تک اس کو بند کرنے کا حکم جاری کر دیا ہے-
 
یاد رہے کہ یہ اس قسم کا پہلا واقعہ نہیں ہے بلکہ کھانے پینے کی دکانوں میں ناقص صفائی کے انتظامات کے سبب اکثر وہاں پر چوہے اور کاکروچ بھی گھومتے ہوئے نظر آتے ہیں جو کہ باہر کے کھانوں کو مشکوک بنا دیتے ہیں۔
Most Viewed (Last 30 Days | All Time)
22 Sep, 2021 Views: 2290

Comments

آپ کی رائے