ایتھریم کے بانی کی صنفی مساوات کے لیے مصنوعی رحم بنانے کی تجویز

image
کرپٹو کرنسی ایتھریم سے تو تقریباً سب ہی واقف ہیں اور بٹ کوائن کے ساتھ اس کا نام بھی خبروں میں زیر گردش رہتا ہے۔ لیکن ایتھریم کے شریک بانی اپنے حالیہ ٹوئٹ کی وجہ سے شدید تنقید کی زد میں آگئے ہیں۔

ایتھریم کے 27 سالہ موجد ویتالک بیوٹرن نے حال ہی میں اپنی ٹوئٹ میں صنفی فرق کو ختم کرنے لیے مصنوعی رحم بنانے کا حل پیش کیا تھا۔

اس بارے میں ان کا کہنا تھا کہ مصنوعی رحم بنانے سے خواتین پر حمل کا دباؤ کم ہوگا جس نے عدم مساوات میں بھی نمایاں کمی آئی گی۔ اور اسی وجہ سے وہ حاملہ خواتین کو مصنوعی رحم کے ساتھ تبدیل کرنا چاہتے ہیں۔

Disparities in economic success between men and women are far larger once marriage+children enter the picture. Synthetic wombs would remove the high burden of pregnancy, significantly reducing the inequality.https://t.co/Zpin8tTlR6

— vitalik.eth (@VitalikButerin) January 18, 2022

ویتالک نے مزید کہا تھا کہ صنفی عدم مساوات میں حیاتیاتی زمانہ حمل اہم رکاوٹ نہیں ہے۔ بلکہ بچوں کی پرورش کے مہنگے اخراجات، محدود حکومتی مدد اور بڑے پیمانے پر ہونے والا جنسی تعصب ہے۔

بیوٹرن کے اس بیان کی حمایت میں کچھ لوگوں نے حمل کے مثبت پہلوؤں کو اُجاگر کرتے ہوئے کہا کہ ویتالک کا بیان حقائق کے منافی ہے۔

Square Adsence 300X250

News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
سائنس اور ٹیکنالوجی
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.