سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے بطور سینیٹر حلف اٹھا لیا

image

پاکستان کے سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے بطور سینیٹر حلف اٹھا لیا ہے۔

منگل کو ایوان بالا کے اجلاس میں چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی نے سابق وزیر خزانہ سے حلف لیا۔

اسحاق ڈار نے بطور سینیٹر حلف اٹھایا تو تحریک انصاف کے ارکان نے شدید احتجاج کیا اور ایجنڈے کی کاپیاں پھاڑ دیں جبکہ حکومتی اتحادی ارکان نے انہیں  مبارکباد دی۔

معاشی مشکلات میں گھرے پاکستان کے وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے اتوار کو اپنے عہدے سے استعفی دے دیا تھا۔

 ان کی جگہ تجربہ کار اسحاق ڈار کو لندن میں وزیراعظم شہباز شریف اور حکمران مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف نے نیا وزیر خزانہ نامزد کیا تھا۔

 نیب ریفرنس میں نامزد اسحاق ڈار کو جمعے کو ہی احتساب عدالت نے وارنٹ گرفتاری معطل کرتے ہوئے پاکستان آکر شامل تفتیش ہونے کی ہدایت کی تھی۔

اسحاق ڈار، مفتاح اسماعیل کے مقابلے میں کیا فرق لا سکتے ہیں؟سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار نوے کی دہائی میں بھی پاکستان کے وزیر خزانہ رہ چکے ہیں جبکہ مسلم لیگ ن کے تیسرے دور حکومت میں بھی 2013 سے 2017 تک وزیر خزانہ کے عہدے پر فائز رہے۔

وہ اپنے دونوں ادوار میں ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر کو کم کرنے اور کم رکھنے میں کامیاب رہے ہیں۔ تاہم ان پر سابق وزیراعظم عمران خان اور دیگر کئی مخالفین کی تنقید کرتے رہے ہیں کہ وہ ایسا مصنوعی طور پر مارکیٹ میں ڈالر بیچ کر کرتے رہے ہیں۔

 اسحاق ڈار سابق وزیراعظم نواز شریف کے سمدھی بھی ہیں جس وجہ سے مسلم لیگ ن میں ان کا خاصا اثرورسوخ بھی ہے بلکہ اسی وجہ سے پیپلز پارٹی کے ساتھ بھی ان کے اچھے مراسم رہے ہیں۔

تجزیہ کاروں کا خیال ہے کہ اسحاق ڈار اتحادی حکومت کو ساتھ لے کر چلنے میں زیادہ معاون ثابت ہو سکتے ہیں۔


News Source   News Source Text

مزید خبریں
پاکستان کی خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.