اگر آپ میں بھی یہ علامات پائی جاتی ہیں تو ۔۔ آج ہی ڈاکٹر بلقیس کا بتایا گیا علاج جان لیں تاکہ تھائی رائیڈ، خواتین میں پائی جانے والی عام بیماری کو کنٹرول کرسکیں

image

تھائیرائیڈ گردن میں تتلی کی شکل کا ایک چھوٹا غدود ہے، جو ہوا کی نالی (ٹریچیا) کے بالکل سامنے ہے۔ یہ ہارمون پیدا کرتا ہے جو آپ کے دل کی دھڑکن اور جسم کے درجہ حرارت جیسی چیزوں کو متاثر کرتا ہے۔ ان ہارمونز کا بہت زیادہ ہونا ناخوشگوار اور ممکنہ طور پر سنگین مسائل کا سبب بن سکتا ہے جن کے علاج کی ضرورت پڑ سکتی ہے۔ زیادہ فعال تھائرائڈ کسی کو بھی متاثر کرسکتا ہے، لیکن یہ مردوں کے مقابلے خواتین میں تقریباً 10 گنا زیادہ عام ہے، اور یہ عموما 20 سے 40 سال کی عمر کے درمیان ہوتا ہے۔ خواتین میں پائی جانے والی عام علامات، اگر آپ میں یہ علامات موجود ہیں تو آج ہی ڈاکٹر سے رجوع کریں۔

تھائیرائیڈ کی علامات:

تھکاوٹ

سردی کی حساسیت میں اضافہ

قبض

خشک جلد

وزن کا بڑھنا

پھولا ہوا چہرہ

کُھردرا پن

خون میں کولیسٹرول کی سطح میں اضافہ

پٹھوں میں درد، نرمی اور سختی۔

آپ کے جوڑوں میں درد، کھچاؤ یا سوجن

بے قاعدہ ماہواری، پیریڈز میں عام دنوں سے زیادہ بھاری پن

پتلے بال

دل کی دھڑکن سست

ذہنی دباؤ اور کمزور یادداشت

بڑھا ہوا تھائیرائیڈ گلینڈ (گوئٹر)

تھائیرائیڈ سے خواتین کو ہونے والے نقصانات:

۔ تھائرائیڈ کی خرابی، بلوغت اور حیض کا غیر معمولی طور پر جلدی یا دیر سے ہونے کا سبب بن سکتی ہے۔ اس کے علاوہ، تھائرائیڈ ہارمونز کی بڑھتی اور کم ہوتی سطح ہلکے یا زیادہ پیریڈز کی وجہ کے ساتھ ساتھ حیض میں بے قاعدگی اور غیر حاضری (ایک حالت جسے امینوریا کہا جاتا ہے) کا سبب بھی بن سکتی ہے۔ ۔ زیادہ فعال یا غیر فعال تھائرائیڈ ہارمون کی کم سطح بیضہ دانی میں مداخلت کر سکتی ہے، جس سے زرخیزی متاثر ہوتی ہے۔ تھائرائیڈ کی خرابی بچہ دانی میں ایگز کی پیداوار کو بالکل بھی روک سکتی ہے۔ جس کی وجہ سے بچہ دانی میں بچے کا ٹھراؤ نہیں ہوپاتا یا پھر بہت مشکل ہوجاتا ہے۔ ۔ حمل کے دوران تھائرائیڈ کی خرابی پیٹ میں موجود بچے کو نقصان پہنچا سکتی ہے اور پیدائش کے بعد ماں میں تھائیرائیڈ کے مسائل کا باعث بن سکتی ہے۔ تھائیرائیڈ ہارمون کی کمی، اسقاط حمل، قبل از وقت پیدائش، مردہ پیدائش اور پیدائش کے بعد بھاری خون بہنے کا سبب بن سکتی ہے۔

ڈاکٹر بلقیس کی رائے:

۔ ڈاکٹر بلقیس نے تھائیرائیڈ کی دو قسموں کے بارے میں بتاتے ہو کہا کہ، ہائیپو تھائیرئیڈ میں بِلو بیریز، شہتوت، اسٹروبیری، جامن، سیب، انڈے اور گرین ٹی اسکے علاوہ سی فوڈز کا استعمال بہترین ہوتا ہے۔ ۔ ہائیپر تھائیرائیڈ میں ثابت دھنئیے کا کہوہ، لیموں ادرک اور دار چینی کی چائے، اسکے علاوہ 50 گرام السی میں 10 دانے کالی مرچ کے ڈال کراسکا پاؤڈر بنالیں اور صبح شام ایک چمچ کھائیں اس سے بہت فائدہ ہوگا۔

تھائیرائیڈ کا علاج:

تھائیرائڈ عام طور پر قابل علاج ہے، اسلیئے ضروری ہے وقت رہتے ڈاکٹر سے اسکا علاج کروالیا جائے ورنہ یہ بڑا مسئلہ بن سکتا ہے۔ تھائیرائیڈ کے علاج مندرجہ ذیل ہیں؛

۔ وہ دوائیں استعمال کریں جو آپ کے تھائرائیڈ کو تھائیڈرو ہارمونز کی بہت زیادہ پیداوار سے روک سکتی ہیں۔

۔ "ریڈیو آئوڈائن ٹریٹمنٹ" جہاں تھائرائیڈ کے خلیات کو تباہ کرنے کے لیے ایک قسم کی ریڈیو تھراپی کا استعمال کیا جاتا ہے، جس سے تھائرائیڈ ہارمونز پیدا کرنے کی صلاحیت کم ہو جاتی ہے۔

۔ تھائیرائیڈ کے کچھ حصوں یا اسے مکمل طور پر ہٹانے کے لیے سرجری بھی ہوتی ہے،جس کی وجہ سے یہ تھائیرائڈ ہارمونز مزید پیدا نہیں ہوتے۔ ان میں سے ہر ایک علاج کے فوائد اور نقصانات ہیں۔ اسلیئے سب سے پہلے ہارمونل حالات کے ماہر (اینڈو کرائنولوجسٹ) سے ملاقات کریں، تاکہ آپ اس بات پر تبادلہ خیال کرسکیں کہ آپ کے لیے کون سا علاج بہترین ہے۔

WATCH LIVE NEWS

You May Also Like :
مزید

Dr Bilquis Tips For Thyroid

Dr Bilquis Tips For Thyroid - Read the best tips, tricks & totkay of Health and Fitness. These tips and tricks are specially developed to cater your needs of Health and Fitness. Now, you do not have to visit multiple websites to be aware about the totkay related to Health and Fitness. So, just read the informative content on Dr Bilquis Tips For Thyroid. These tips and tricks will surely play a great role in enhancing your beauty.