’تاڑنے‘ والے افراد کو دیکھنے کے بعد ہی’تاڑو ماڑو‘ گانا بنایا ، گلوکار علی گل پیر

’تاڑنے‘ والے افراد کو دیکھنے کے بعد ہی’تاڑو ماڑو‘ گانا بنایا تھا۔

تفصیلات کے مطابق کامیڈین و گلوکار علی گل پیر اپنے منفرد اور تنقیدی گانوں کی وجہ سوشل میڈیا پر بہت مشہور ہیں۔

علی گل پیرکے گانے بھی بہت مقبول ہے اوران کے گانوں کو پسند کرنے کی وجہ تنقیدی اور مزاح انداز ہے۔

View this post on Instagram

Ali Gul Pir Talks About His "Taroo Maroo" Song In BOL Nights With Ahsan Khan Watch BOL Nights With Ahsan Khan On Monday At 10:00 PM Only On BOL Entertainment #BOLNightsWithAhsanKhan #BOLNights #BOLEntertainment #AhsanKhan​ #TaimoorSalahuddin #Mooroo #AliGulPir #Celerbrities #Pakistan #LifeStyle #Showbiz #ShowbizPakistan #Pakistanicelebrities #drama #insta #instagram #instalove #dramafree #style #model #actor #actress #VJ #entertainment @khanahsanofficial @therealaligulpir

A post shared by BOL Entertainment (@bolentofficial) on Jan 15, 2020 at 6:21am PST

خیال رہے کہ گلوکار علی گل کو مزاحیہ تنقیدی گانے ’وڈیرا کا بیٹا‘ سے  بہت شہرت حاصل ہوئی تھی جس کے بعد انہوں نے اسی طرح کے دیگر کامیڈی تنقیدی گانے بھی ریلیز کیے۔

بول نیٹ ورک کے مقبول ترین پروگرام بول نائٹ میں کامیڈین و گلوکار علی گل پیر نے شرکت کی تھی۔

پروگرام ’بول نائٹ ود احسن خان‘ میں شرکت کے دوارن انہوں نے اپنے کیریئر سمیت دیگر موضوعات پر بات کی اور بتایا کے کس طرح انہوں نے کامیابیوں کا سفر طے کیا ہے۔

یاد رہے کہ علی گل پیر نے 2012 کے آخر میں ہی ’تاڑو ماڑو‘ گانا ریلیز کیا اور مذکورہ گانے نے بھی خوب پذیرائی حاصل کی۔

علی گل پیر نے بول نائٹ میں انکشاف کیا کہ’تاڑو ماڑو‘ گانا معاشرے کے تاڑنے‘ والے افراد کے رویوں کو دیکھ کر بنایا تھا۔

گلوکار کے مطابق جب وہ کم عمر تھے تو انہوں نے دیکھا کہ لوگ ان کی والدہ کو بہت ’تاڑتے‘ ہیں انہوں نے بتایا کہ  13 سال کی عمر کے تھے تو اپنی والدہ کی حفاظت کرنا چاہتے تھے۔

گلوکار کے مطابق جب وہ اپنی والدہ کے ساتھ باہر نکلتے تھے تو وہ دیکھتے تھے کہ لوگ ان کی والدہ کو ’تاڑتے‘ ہیں اور تب انہیں غصہ آتا تھا۔

کےپوپ سنگرنےخودکشی کرلی

انہوں نے بتایا کہ پھر انہوں نے سوچا کہ ان کی والدہ تو اپنی جگہ لیکن ایسے ہی لوگ روزانہ دفتروں، اسکولز، کالجز و دیگر مقامات پر آنے جانے والی خواتین کو بھی اس طرح ’تاڑ‘ کر انہیں تنگ کرتے ہوں گے۔

خیال رہے کہ ’ماڑو‘ لفظ سندھی کے لفظ ’مانھوں‘ سے لیا گیا ہے جس کا مطلب ’افراد‘ یا ’لوگ‘ ہوتے ہیں۔

’تاڑو ماڑو‘ کا مطلب دوسرے لوگوں کو ’گھورنے یا تاڑنے والے افراد‘ ہے۔

اس سے قبل علی گل پیر کو ’وڈیرا کا بیٹا‘ گانے پر بھی تنقید کا نشانہ بھی بنایا گیا تھا تاہم انہوں نے کبھی بھی کسی تنقید کا جواب نہیں دیا۔

علی گل پیر کا تعلق صوبہ سندھ کے ضلع دادو کے ایک جاگیردار گھرانے سے ہے اور ان کے والدین کی بچپن میں ہی طلاق ہوگئی تھی۔

واضح رہے کہ علی گل پیر اسلام آباد میں پیدا ہوئے تھے اور انہوں نے کینیڈا میں تعلیم حاصل کرنے کے بعد کراچی سے بھی تعلیم حاصل کی اور یہیں سے اپنے کیریئر کے بطور گلوکار شروعات کی۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.