بھارت: ٹک ٹاک سمیت 59چینی ایپس پر مستقل پابندی عائد

بھارت نے ٹک ٹاک سمیت 59 چینی موبائل ایپلی کیشنز پر ہمیشہ کیلئے پابندی عائد کردی۔

کے مطابق وزارت الیکٹرانک اور انفارمیشن ٹیکنالوجی کی جانب سے ٹک ٹاک سمیت 59 چینی ایپس پر مستقل پابندی عائد کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا۔

بھارت کی وزارت الیکٹرانک اور انفارمیشن ٹیکنالوجی نے جون 2020ء میں علی بابا کا یو سی براؤزر، وی چیٹ اور ٹک ٹاک سمیت 59 چینی ایپلی کیشن پر پابندی عائد کی تھی۔

بھارتی حکومت نے 59 چینی ایپس پر عارضی پابندی عائد کرتے ہوئے کمپنیوں کو رازداری اور سیکیورٹی سے متعلق اپنے مؤقف کی وضاحت کرنے کا موقع فراہم کیا تھا۔

بھارتی حکومت کا کہنا ہے کہ چینی ایپس کی جانب سے فراہم کی جانے والی وضاحت سے مطمئن نہیں، یہی وجہ ہے کہ ان پر ملک میں مستقل طور پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔

نوٹیفکیشن میں مزید کہا گیا ہے کہ یہ ایپلی کیشنز بھارت کی خود مختاری، سالمیت، بھارت کے دفاع، ریاست کی سلامتی اور عوامی نظم و ضبط سے متصادم ہیں۔

بھارتی حکومت کی جانب سے چینی ایپلیکیشنز پر پابندی کا فیصلہ لداخ سرحد پر بھارتی اور چینی فوجیوں کے درمیان جھڑپیں شروع ہونے کے بعد ہوا تھا، جس میں 20 بھارتی فوجی ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے تھے۔

بھارت نے ستمبر 2020ء میں بھی پب جی گیم سمیت 118 موبائل ایپس پر پابندی عائد کی تھی۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.

72