اسپیکربلوچستان اسمبلی نے ظہوربلیدی کو پارلیمانی لیڈر مقرر کردیا

image

اسپیکر بلوچستان اسمبلی نے بی اے پی کے 12 اراکین کی درخواست پر ظہور بلیدی کو پارلیمانی لیڈر مقرر کردیا جبکہ وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے نو مقرر شدہ پارلیمانی لیڈر پر اعتراض کی درخواست اسمبلی میں جمع کرادی۔

بلوچستان اسمبلی سیکریٹریٹ سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق بی اے پی (باپ) پارٹی کے 12 اراکین کے دستخط سے جمع کرائی گئی درخواست پر عملدرآمد کرتے ہوئے ظہور احمد بلیدی کو بلوچستان اسمبلی میں باپ پارٹی کا پارلیمانی لیڈر مقرر کردیا گیا۔

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کی جانب سے اسپیکر بلوچستان اسمبلی کے نام خط لکھ کر ظہور بلیدی کو پارلیمانی لیڈر مقرر کرنے پر اعتراض اٹھایا گیا ہے۔

خط میں وزیراعلیٰ بلوچستان نے کہا ہے کہ وہ الیکشن ایکٹ 2017ء کے تحت پارٹی کے پارلیمانی لیڈر مقرر کئے گئے ہیں اور وہ پارٹی کے سربراہ اور قائد ایوان بھی ہیں۔

انہوں نے مزید کہا ہے کہ ظہور بلیدی کو پارلیمانی لیڈر نامزد کرنے سے متعلق دی گئی درخواست پر دستخط بادی النظر میں جعلی ہیں، جن کی جانچ کرانے کی ضرورت ہے۔

جام کمال خان کا مؤقف ہے کہ پارٹی سربراہ کی اجازت کے بغیر اور جعلی دستخطوں کی بنیاد پر نئے پارلیمانی لیڈر سے متعلق کوئی فیصلہ نہ کیا جائے۔

واضح رہے کہ وزیراعلیٰ جام کمال خان کیخلاف گزشتہ روز حکومت کے ناراض اراکین کی جانب سے تحریک عدم اعتماد جمع کرائی گئی تھی، اسپیکر عبدالقدوس بزنجو نے تحریک پر ووٹنگ کیلئے 25 اکتوبر کی تاریخ مقرر کی ہے۔


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
تازہ ترین خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.