ورڈل:انٹرنیٹ پرسب بُھلا دینےوالانیاجُنون اُردومیں بھی

image

آن لائن گیمنگ نوجوان طبقے کے ساتھ ساتھ دیگرکے لیے بھی دلچسپی کا باعث ہے حتیٰ کے بعض کا یہ شوق تو جنون کی شکل اختیارکرلیتا ہے، بلو وہیل اور پب جی جیسے گیم اس کی عام مثالیں ہیں جن سے متاثرہوکرلوگ جان تک سے ہاتھ دھو بیٹھتے ہیں۔

لیکن اب بات جنون سے نکل کرہوشمندی تک آپہنچی ہے، سوشل میڈیا پران دنوں ‘ورڈل’ نامی ویب براؤزر گیم کی مقبولیت میں تیزی سے اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے جو ذہنی آزمائش سے متعلق ہے،سب سے اہم بات اس گیم کا دنیا کی مختلف زبانوں میں کھیلا جانا ہے۔

دسمبر 2021 کے آخر میں برازیل سے تعلق رکھنے وال گوگل انجینئرنگ مینیجر فرنینڈو سربونسینی نے ڈیزائن کے کسی بھی مسئلے سے پاک ورڈل کوانتہائی دلچسپ پاتے ہوئے اسے اپنی مادری زبان میں ڈھالنے کا فیصلہ کرتے ہوئے اس کا پرتگالی ورژن تیار کیا، بنیادی گیم پلے کو تبدیل کیے بغیر ایڈجسٹمنٹ کرنے میں کامیابی پر فرنینڈونے تشہیرکی نیت سے دوستوں کولنک بھیجا جنہوں نے گروپ چیٹ میں اسے اپنے دوستوں کے ساتھ شیئرکیا اور صرف ایک گھنٹے میں سائٹ پر 10 ہزار صارفین آگئے۔

اس کے بعد یہ گیم پوری دنیامیں وائرل ہوئی اورفرنینڈوواحد نہیں تھا جو اسے اپنی زبان میں کھیلناچاہتا تھا، اب ورڈل انگریزی کے علاوہ ایک درجن سے زائدزبانوں میں کھیلا جارہا ہے جن میں ہسپانوی، جرمن، اردو، ہنگری ،جاپانی اور دیگرشامل ہیں حتیٰ کہ اس کا تامل ورژن بھی دستیاب ہے۔

دن بدن مقبول ہونے والے اس گیم کوبالکل مفت میں کھیلا جاسکتا ہے اور اس کا خاص پہلو اس بات کا خیال رکھاجانا ہے کہ کھیلنے والوں کا وقت ضائع نہ ہو۔ورڈل تخلیق کرنے والے انجینیئرجوش وارڈل کا کہنا ہے کہ یہ کھیلنے والوں کا قیمتی وقت برباد نہیں کرتا کیوںکہ اسے صرف 3 منٹ میں کھیلا جاسکتا ہے۔

وضع کردہ اصولوں کے مطابق آپ کو5 خانوں میں 5 حروف منتخب کرکے بامعنی جملہ لکھنا ہوتا ہے جس کےلیے کھیلنے والوں کو 6 مرتبہ الفاظ شامل کیے جانے کاآپشن دیا جاتا ہے، کئی افراد اسے چٹکیاں بجاتے حل کرلیتے ہیں تو کئی غورفرماتے رہتے ہیں۔

صحیح جگہ حروف رکھنے پرسفید خانہ سبزہوجاتا ہے جبکہ غلطی کی صورت میں یہی سفید رنگ پیلے میں تبدیل ہوجاتا ہے جبکہ بھورارنگ یہ بتائے گا کہ آپ کا تخلیق کردہ حُرف تو وجود ہی نہیں رکھتا، ورڈل کے کئی درجے ہیں جن میں کھیلنے والوں کی دلچسپی بتدریج بڑھتی چلی جاتی ہے اور وہ اپنے شاندار نتیجے کو سوشل میڈیا پرشیئربھی کرسکتے ہیں۔

ورڈل کا ہر نیا معمہ 24 گھںٹے بعد پیش کیا جانا کھیلنے والوں کا وقت بچانے کا اہم سبب ہے اور اسے کھیلنے کے لیے کسی قسم کی رجسٹریشن یا ای میل کے اندراج کی بھی ضرورت نہیں پڑتی۔


News Source   News Source Text

مزید خبریں
سائنس اور ٹیکنالوجی
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.