عامر نےپاکستان کی نمائندگی کےامکانات کومسترد کردیا

image

قومی کرکٹ ٹیم کے سابق فاسٹ بولر محمد عامر نے دوبارہ پاکستان کی نمائندگی کے امکانات کو مسترد کردیا۔

ٹی10 لیگ میں بنگلا ٹائیگرز کی نمائندگی کرنے والے محمد عامر نے ورچوئل پریس کانفرنس گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پی سی بی کی نئی منجمنٹ کے ساتھ کوئی رابطہ نہیں ہوا ہے اور جب کوئی کرے گا تو ریٹائرمنٹ پر فیصلہ واپس لینے کا سوچوں گا۔

قومی ٹیم میں عزت سے واپسی چاہتا ہوں تاہم خود سے ریٹائرمنٹ کا فیصلہ واپس نہیں لے رہا جبکہ یہ امکان بھی غلط ہے کہ میں جلد واپسی کررہا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ فیملی کے ساتھ وقت گزار کر زندگی کا بھرپور لطف اٹھا رہا ہوں۔ لیگ کرکٹ کھیل کر انجوائے کرتا ہوں۔ دبئی کرکٹ کونسل کا پاک بھارت سیریز کی پیشکش کرنا خوش آئند ہے، اس حوالے سے دونوں حکومتوں کو بھی بات کرنی چاہیے۔

محمد عامر کا موقف تھا کہ ورلڈکپ سیمی فائنل میں آسٹریلیا کے خلاف شکست کی وجہ حسن علی کے ڈراپ کیچ کو قرار دینا درست نہیں۔ حسن علی کا شمار بہترین فیلڈرز میں سے ہوتا ہے۔ کیچز ڈراپ ہونا کھیل کا حصہ ہے۔

سابق کرکٹر نے مزید کہا کہ کوہلی بلاشبہ بہترین بلےباز ہیں تاہم اسٹیون اسمتھ مشکل ترین بیٹسمین ہیں، اسمتھ کو بولنگ کرنا ہمیشہ ایک چیلنج رہا ہے۔

فاسٹ بولر محمد عامر کے مطابق ٹی10 کرکٹ میں بولنگ کرنا مشکل ہوتا ہے۔ ٹی 10 کرکٹ کو اولمپکس کا حصہ بنانے سے کھیل مقبول ہوگا۔

عامر نے کہا کہ کوویڈ-19 کو شکست دینے کے بعد کمزوری ہے لیکن پہلے سے بہت بہتر محسوس کر رہا ہوں۔


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
تازہ ترین خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.