بیلن ڈی اور‘ لیونل  میسی ریکارڈ ساتویں بار ٹرافی لے اڑے

image

کورونا وائرس کوویڈ 19 سے متاثرہ فٹبال کی عالمی سرگرمیاں بحال ہونے کے بعد سال رواں 2021  کے بہترین انٹرنیشنل فٹبالر کا اعزاز ریکارڈ ساتویں بار  پیرس سینٹ جرمین سے تعلق رکھنے والے ارجنٹائنٹی اسٹار فٹبالر لیونل میسی لے اڑے ۔

ان کے روایتی حریف کرسٹیانو رونالڈو ٹاپ فائیو میں بھی جگہ نہ بنا پائے۔ بیلن ڈی اور کا میلہ دو سال کے وقفے کے بعد منگل کو پیرس میں منعقد ہوا تھا ۔ میسی کے قریب ترین حریف بائرن میونخ کے پولش کپتان اور گول مشین رابرٹ لیوانڈوسکی تھے جبکہ اٹلی کے جارجینہو تیسرے نمبر پر آئے۔ مانچسٹر یونائیٹڈ سے تعلق رکھنے والے پرتگالی فٹبالر کرسٹیانو رونالڈو چھٹے نمبر رہے۔ برازیلین اسٹار نیمار ٹاپ 10  میں بھی شامل نہیں تھے۔

میسی کو بیلن ڈی اور ٹرافی یورو گوئے کے معروف فٹبالر اور بارسلونا کے سابق لوئیس سواریز نے پیش کی اور انہیں گلے لگا کر مبارکباد بھی دی ۔  میسی کے ایوارڈ جیتنے پر ایفل ٹاور پر ان کا نام روشینیوں سے اجاگر کیا گیا اور وہاں سات  گولڈن گوٹ بھی رکھی گئی تھیں ۔ میسی کو 613 ‘ لیوانڈوسکی کو 580 ‘ اٹلی اور چیلسی جارجینہو کو 460 ‘فرانس کے کریم بن جمعہ کو 239 پوئنٹس ملے ۔ چیلسی کے فراسیسی کھلاڑی این گولوکانتے 186  پوائنٹس پانچویں نمبر پر رہے۔

سال کی بہترین فٹبالر کا اعزاز بارسلونا کی 27 سالہ کپتان اور مڈفیلڈر الیکسیا پوٹیلس کے حصے میں آیا ۔ انہوں نے یورپ میں سیزن میں سب سے زیادہ 26 گول کیے  تھے ۔ وہ یوایفا ویمنز پلیئر آف دی ائر اور مڈ فیلڈر آف دی ائر کے اعزازات  بھی جیت چکی ہے۔

الیکسیا پوٹیلس نے 186 پوائنٹس حاصل کیے ۔ ان کی کلب کی ساتھی جینیفر ہرموسو 84 پوائنٹس دوسرے اور چیلسی کی آسٹریلین اسٹار سام کیئر 46 پوائنٹس تیسرے نمبر پر رہی ۔ آرسنل اور ہالینڈ کی وویانی میڈیما 46 پوائنٹس چوتھے اور بارسلونا کی لیکی مارٹینز  40  پوانٹس  کے ساتھ پانچویں نمبر پر رہی۔

مینز بیلن ڈی اور ایوارڈ کیلئے 180 صحافیوں نے کھلاڑیوں کو پوائنٹس دیئے جبکہ 50  ویمنز فٹبال جرنلسٹس نے کھلاڑیوں کے انتخاب کیا۔ پہلے نمیر کیلئے چھ ، دوسرے کیلئے چار اور تیسرے کیلئے تین چوتھے کیلئے دو اور پانچویں نمبر کیلئے ایک پوائنٹ تھا۔

لیونل میسی اورالیکسیا دونوں نے بارسلونا کی نمائندگی کرتے ہوئے چیمپئنز لیگ جیتی اور دونوں نے ہی اس کلب کے ساتھ  ایک سال میں تین ٹرافیاں اپنے نام کی تھیں ۔ اب وہ دونوں اسی  کلب میں کارکردگی کی بنیاد پر بیلن ڈی اور کے ٹائٹل ہولڈر ہیں اس طرح  بارسلونا کو منفرد اعزاز بھی حاصل ہوا ہے۔ بارسلونا کے پیڈری انڈر 21 بہترین کھلاڑی کا ایوارڈ لے گئے۔

اسٹرائیکر آف دی ائر کا نیا ایوارڈ پولینڈ اوربائرن میونخ کی گول مشین رابرٹ لیوانڈوسکی کے حصے میں آیا۔

ارجنٹائنی اسٹار لیونل میسی نے پہلی بار 2009 میں بیلن ڈی اور ایوارڈ جیتا تھا اور وہ مسلسل چار سال 2009 ‘ 2010 ‘ 2011 اور 2012  میں اس ایوارڈ  کو اپنے نام کرنے میں کامیاب رہے۔ انہوں نے 2015 اور 2019 میں بھی بیلن ڈی اور اعزاز حاصل کیا تھا۔

کرونا وائرس کوویڈ 19 پینڈامک کی وجہ سے فٹبال فرانس نے  2020  میں بیلن ڈی اور ایوارڈ  منسوخ کر دیا تھا ۔ 1956 کے بعد یہ پہلا موقع تھا کہ ایوارڈ کا انعقاد نہیں ہو سکا تھا۔ سنہ 2020 میں غیر معمولی کارکردگی کی وجہ سے لیوانڈوسکی کے ساتھ لیورپول کے محمد صلاح بھی بیلن ڈی اور ایوارڈ کیلئے ہاٹ فیورٹ فٹبالرز تھے۔ فرانس فٹبال کی جانب سے یہ ایوارڈ مینز اور ویمنز دونوں کیٹیگریز میں دیا جاتا ہے ۔ خواتین فٹبالرز کی نسبت مردوں میں اس ایوارڈ کیلئے بہت سخت مقابلہ ہوتا ہے۔

بیلن ڈی اور ایوارڈ 1955تک صرف یورپی فٹبالرز کو دیا جاتا تھا لیکن پھر اسے یورپی کلبس کی نمائندگی کرنے والے کسی بھی غیریورپی ملک کے فٹ بالرز تک وسعت دی گئی تھی جبکہ 2007  میں اس کا دائرہ دنیا بھر کے فٹبالرز تک بڑھا دیا گیا تھا ۔ 2010  میں بیلن ڈی اور کو فیفا کے عالمی فٹبال ایوارڈ کے ساتھ یکجا کر دیا گیا تھا اور یہ سلسلہ 2015  تک جاری رہا ۔ 2016 میں فٹ بال کی عالمی تنظیم فیفا نے اس سے الگ ہو کر بہترین عالمی فٹبالر کیلئے اپنے ایوارڈ کا دوبارہ اجرا کر دیا تھا ۔

فٹبال کے کھلاڑیوں کی مجموعی کارکردگی ٹیم میں کامیابی کیلئے اہمیت کی حامل ہوتی ہے لیکن کچھ  کھلاڑی غیر معمولی صلاحیتوں کے حامل ہوتے ہیں جو تنہا کھیل کا پانسہ پلٹ دیتے ہیں اور فٹبال کی دنیا میں ایسے کھلاڑیوں موجود ہیں جو ایسی حیرت انگیز کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہیں  کہ دیکھنے والے انگشت بدندان رہ جاتے ہیں ۔ ایسے ہی غیر معمولی کھیل کا جائزہ لے کر فٹبال فرانس کی جانب سے ہر سال بہترین فٹبالرز کو بیلن ڈی اور ایوارڈ دیا جاتا ہے۔

ارجنٹائنی اسٹار کا کہنا تھا کہ ایک بار پھر یہ ایوارڈ  جیتنے پر میں انتہائی مسرور ہوں ۔ دو سال قبل جب میں یہ ایوارڈ جیتا تھا تو مجھے یوں لگا تھا کہ یہ میری پیرست میں آخری ٹرافی ہے ۔ سال رواں کوپا امریکہ میں فتح لیونل میسی کی زندگی کی اہم ترین کامیابی ہے کیونکہ ان کی  موجودگی میں قومی ٹیم پہلی بار کوئی ٹرافی جیتی تھی ۔ ماراکانا کے تاریخی اسٹیڈیم میں اینجل ڈی ماریا نے فیصلہ کن گول نے ارجنٹینا کو فائنل میں برازیل کے خلاف فتح سے ہم کنار کیا تھا۔ اس کامبابی پر میسی کی آنکھوں میں آنسوئوں کی جھڑی لگ گئی تھی۔

میسی نے کہا کہ میں ابھی میدان میں موجود ہوں ‘ اگلے سال اور پھر اس کے بعد بھی آؤں گا ۔ میں اس کامیابی پر اپنے ساتھیوں اور کوچز کا بھی شکر گزار ہوں جن کی مدد کے بغیر میں اس مقام پر نہیں پہنچ سکتا تھا۔

لیونل میسی کا کہنا تھا کہ فٹبال فرانس کو لیوانڈوسکی کو 2020 کا بیلن ڈی اور ٹرافی دینی چاہیے۔  آپ گزشتہ سال غیرمعمولی کارکردگی کی وجہ سے اس ایوارڈ کے بجا طور پر مستحق تھے ۔ رابرٹ آپ کے ساتھ اس اعزاز کیلئے مقابلے کی دوڑ  میرے لیے  باعث فخر ہے ۔ آپ کا کھیل اور گول کرنے کی صلاحیت غیر معمولی ہے۔

بیلن ڈی اورٹائٹل کی دوڑ میں دوسری پوزیشن حاصل کرنے والے لیوانڈوسکی کا کہنا ہے کہ میدان میں کھلاڑیوں کی کارکردگی کو مدنظر رکھتے ہوئے پوائنٹس دیئے گئے اور میں میسی کو ایک بار پھر ایوارڈ جیتنے پر مبارکباد دیتا ہوں ۔  میں اپنی پوزیشن پر مطمئن اور خوش ہوں مجھے امید ہے کہ اس میں کوئی سیاست نہیں تھی۔

سال رواں میں اس ایوارڈ کیلئے دنیا بھر کے 30  بہترین فٹبالرز کے ناموں کو شارٹ لسٹ کیا گیا تھا ۔ اس سے قبل گزشتہ 12 ایوارڈز میں سے دو لیجنڈ فٹبالرز لیونل میسی اور کرسٹیانو رونالڈ نے11 ایوارڈ اپنے نام کیے تھے  جبکہ کروشیا کے کپتان لوکا موڈرچ 2018 میں ایک مرتبہ ان کی بالا دستی کو توڑنے میں کامیاب ہوئے تھے۔

 اسپین اور بارسلونا کے نوجوان کھلاڑی پیڈری گونزالز 89 پوائنٹس کو انڈر 21  کوپا ٹرافی دی گئی یہ ایوارڈ پہلی بار متعارف کروایا گیا ہے ۔ انگلینڈ اور بورسیا ڈورٹمنڈ کے جوڈی بلنگہیم 39  پوائنٹس دوسرے ‘ جرمنی اور بائرن میونخ کے جمال موسیالا 38 پوائنٹس  تیسرے ‘ پرتگال اور پی ایس جی کے  نونو مینڈس 23   پوائنٹس چوتھے اور انگلینڈ و مانچسٹر یونائیٹیڈ کے میسن گرین 15 پوائنٹس کے ساتھ پانچویں نمبر پر رہے۔ اس ایوارڈ کیلئے  32 سابق بیلن ڈی اورونزز بہترین کھلاڑی کا انتخاب کیا۔  پہلے نمبر کیلئے پانچ ‘ دوسرے کیلئے تین اورتیسرے کیلئے  ایک پوائنٹ تھا۔

شارٹ لسٹ  میں شامل دیگر فٹبالرز میں پرتگال اور مانچسٹر یونائیٹیڈ کے کرسٹیانو رونالڈو 178 پوائنٹس ‘ لیورپول اور مصر کے محمد صلاح 121‘ پوائنٹس بلجیئم اور مانچسٹر سٹی کے  کیون ڈی بروئن 73 پوائنٹس ‘ پی ایس جی اور فرانس کے کلیان امباپے 58 پوائنٹس ہیں۔

 اٹلی اور پی ایس جی کے ڈوناراما 36 پوائنٹس ‘ناروے اور بورسیا ڈورٹمنڈ کے ارلنگ ہالینڈ 33 پوائنٹس ‘ بلجیئم اور میلان کے لوکاکو  26 پوائنٹس ‘ اٹلی کے  جارجیو شیلینی 26 پوائنٹس ‘ اٹلی اور یوونٹس کے لیونارڈو بنوچی 18 پوائنٹس ‘ انگلینڈ اور مانچسٹر سٹی کے رحیم اسٹرلنگ 10 پوائنٹس ‘ برازیل اور پیرس سینٹ جرمین کے نیمار 9 پوائنٹس ‘یوروگوئے اور ایٹلیٹیکو میڈرڈ کے لوئیس سواریز 8 پوائنٹس مل سکے۔

ڈنمارک اور اے سی میلان کے سائمن کیجر 8 پوائنٹس ‘ انگلینڈ اور  الجزائر اور مانچسٹر سٹی کے ریاض مہریز 7 پوائنٹس ‘ انگلینڈ اور چیلسی کے میسن مونٹ 7 پوائنٹس ‘ پرتگال اور مانچسٹر پونائیٹیڈ کے برونو فرنانڈس 6 پوائنٹس ‘ارجنٹینا اور انٹر میلان کے لوتارو مارٹینز 6 پوائنٹس  ‘ انگلینڈ اور ٹوٹنہیم کے ہیری کین4 پوائنٹس ‘ ‘ اسپین اوربارسلونا کے پیڈری 3 پوائنٹس ‘ انگلینڈ اورمانچسٹر سٹی کے فل فوڈن 2 پوائنٹس ‘پرتگال اورمانچسٹر سٹی کے روبن ڈیاز ‘ اٹلی کے نکولو بریلا اور جیرارڈ مورینو کو ایک ایک پوائنٹ ملا۔

اٹلی اور پیرس سینٹ جرمین کے گول کیپر جیان لوگی ڈونا راما   کو سال کے بہترین گول یاشین ٹرافی دی گئی ۔ چیلسی اور سینیگال کے گول کیپر ایڈوارڈو مینڈی دوسرے ‘ سلوانیا اور ایٹلیٹیکو میڈرڈ کے جان اوبلک تیسرے ‘مانچسٹر سٹی کے برازیلین گول کیپر ایڈرسن چوتھے اور بائرن میونخ جرمنی کے مینوئل نوئیر جرمنی بائرن میونخ پانچویں نمبر پر آئے ۔ انگلش فٹبال کلب چیلسی کو شاندار کارکردگی پر کلب آف دی ائر قرار دیا گیا۔

بیلن ڈی اور کا اعزاز ساتویں مرتبہ جیتنے والے لیونل میسی اس بار بھی ایوارڈ کیلئے فیورٹ تھے جنہوں نے اپنے سابق ہسپانوی کلب کی نمائندگی کرتے ہوئے لالیگا میں 30 گول کیے تھے اور اپریل میں بارسلونا  کو کوپا ڈل رے بھی جتوایا تھا۔

انہوں نے چیمپئنزلیگ میں بھی چھ گول کیے ہیں ۔ لیونل میسی نے اپنے ملک ارجنٹینا کو کوپا امریکہ کپ جتوانے کا کارنامہ بھی انجام دیا تھا ۔ کلب فٹبال اور انفرادی کارکردگی میں ٹرافیوں کا انبار لگانے والے لیونل میسی نے اپنے کیریئر میں ارجنٹینا کی نمائندگی کرتے ہوئے یہ پہلا ٹورنامنٹ جیتا تھا ۔ کوپا امریکہ کے فائنل میں ارجنٹینا نے برازیل کو زیر کیا تھا اوروہ ٹورنامنٹ کے بہترین کھلاڑی بھی قرار پائے تھے۔

لیونل میسی ہسپانوی فٹبال کلب بارسلونا کی نمائندگی کرتے تھے لیکن اچانک ہی بارسلونا نے ان کے ساتھ اپنا طویل ترین تعلق ختم کر دیا اور اب لیونل میسی فرانسیسی کلب پیرس سینٹ جرمین کی نمائندگی کر رہے ہیں ۔ انہوں نے 2021 کے سیزن میں شائقین فٹبال کو اپنے سحر انگیز کھیل میں جکڑ کر رکھا ہے۔ ان کی کارکردگی کا اندازہ اس سے لگایا جا سکتا ہے کہ انہوں نے اس سیزن میں بارسلونا اور پی ایس جی کی نمائنگی کرتے ہوئے  41 گول کیے اور 14  گول کرنے میں ساتھی فٹبالرز کی معاونت کی۔

پولینڈ کے کپتان رابرٹ لیوانڈوسکی گزشتہ سال اور اس سے قبل زبردست فارم میں تھے انہوں نے گزشتہ برس جرمنی کی فٹبال لیگ میں زبردست کارکردگی دکھائی تھی ۔ اگر گزشتہ برس اس ایوارڈ کی تقریب منعقد ہوتی تو وہ ایوارڈ کیلئے ہاٹ فیورٹ تھے ۔ انہوں نے بائرن کو تین ٹرافیاں جتوائی تھیں اور 48 میچز میں 54 گول کیے تھے۔ اس بار بھی انہوں نے اپنے جرمن کلب بائرن میونخ کی کامیابیوں میں مرکزی کرادر ادا کیا۔ وہ بھی فیورٹ کھلاڑیوں کی فہرست میں شامل تھے ۔ انہوں نے گزشتہ سیزن کے آغاز کے بعد 60 میچز میں 73 گول کیے ۔ انہیں گزشتہ سال 2020 میں فیفا اور یوایفا کے بہترین فٹبالر کے ایوارڈز ملے تھے۔

لیوانڈوسکی نے 2020-21 جرمن فٹبال لیگ بنڈس لیگا میں 41 گول کر کے یورپین گولڈن شو جیتا تھا اور بائرن میونخ کو جرمن لیگ ٹائٹل چیمپئن بنوانے میں مرکزی کردار ادا کیا تھا ۔

اس مرتبہ بھی انہوں نے اپنے بہترین کھیل سے بائرن میونخ کو فتح کی شاہراہ پر گامزن رکھا ہوا ہے اور گول کرنے کی صلاحیت غیرمعمولی صلاحیت کی وجہ سے انہیں پولش گول مشین کہا جاتا ہے۔ لیوانڈوسکی نے چیمپئنز لیگ کے نو میچز میں مسلسل گول کیے اور وہ 9 میچوں میں 9 گول کرنے والے پہلے فٹبالر ہیں ۔

بیلن ڈی اورایوارڈ پر  لیونل میسی اور رونالڈو کی بالادستی 2008 سے قائم ہے۔ کرسٹیانو رونالڈو نے2008 میں پہلی مرتبہ یہ ایورڈ جیتا تھا اور میسی دوسرے نمبر پر آئے تھے تاہم اگلے سال میسی یہ ایوارڈ پہلی بار اپنے نام کرنے میں کامیاب ہو گئے ۔ 2007 میں برازیلین فٹبالر کاکا بیلن ڈی اور ایوارڈ لے اڑے تھے۔

کرسٹیانو رونالڈو دوسرے اور میسی تیسرے نمبر پر تھے۔ اس کے بعد میسی چھ مرتبہ اور رونالڈو پانچ مرتبہ بہترین فٹبالر کا ایوارڈ جیت چکے ہیں۔ میسی پانچ مرتبہ دوسرے اور رونالڈو چھ مرتبہ دوسرے رہے جبکہ دونوں فٹبالر ایک ایک بار تیسرے نمبر پر آئے۔

فرانس کے انٹرنیشنل فٹبالر کریم بن جمعہ کو ساتھی کھلاڑی کو بلیک میل کرنے کی کوشش کے الزام میں ایک سال کی معطل سزا سنائی گئی ہے ۔  وہ  بیلن ڈی اور ایوارڈ کیلئے پوائنٹس ٹیبل پر چوتھے نمبر پر آئے۔

رواں سیزن میں ریال میڈرڈ کی جانب سے ان کی کارکردگی شاندار رہی ہے اور اس ایوارڈ کیلئے ان کے سپورٹرز میں زین الدین زیڈان ‘تھیری آنری اور ٹینس لیجنڈ رافیل نڈال بھی شامل ہیں ۔ انہوں نے 46 میچز میں 30 گول کیے اور 9 گول کرنے میں ساتھی کھلاڑیوں کی معاونت کی۔ تاہم وہ ایوارڈ کی تقریب میں شرکت نہیں ہوئے  ۔ کرسٹیانو رونالڈو بھی پیرس  نہیں آئے تھے۔

بیلن ڈی اور ویمنز کیٹیگری کیلئے شارٹ لسٹ میں شامل دیگر فٹبالرز کی پوائنٹس ٹیبل پر پوزیشن اس طرح رہی ۔ کرسٹین سنکلیئر (پورٹ لینڈ تھرونز)36  پوائنٹس ‘پرنیل ہارڈر (چیلسی) 33 پوائنٹس ‘ ایشلے لارنس (پیرس سینٹ جرمین)26 پوائنٹس ‘ جیسی فلیمنگ (چیلسی) 25 پوائنٹس ‘ فران کربی (چیلسی) 22 پوائنٹس ‘‘میگڈالینا ایرکسن (چیلسی) 20  پوائنٹس ‘ کرسٹائن اینڈلر (لیون) 19 پوائنٹس ‘ سٹینا بلیک سٹینیس (بی کے ہیکن ) 10 پوائنٹس ‘سمانتھا میوس ( نارتھ کیرولینا کریج )8 پوائنٹس ‘آرینی پریڈس (بارسلونا) 8 پوائنٹس ‘ ایلن وائٹ (مانچسٹر سٹی)  4 پوائنٹس ‘ ڈیانی کیڈیاٹو (پیرس سینٹ جرمین)  3  پوائنٹس ‘ میری اینٹونیٹ کاٹوٹو (پیرس سینٹ جرمین) 3 پوائنٹس‘سینڈرا پینوس (بارسلونا) 3 پوائنٹس  اور  وینڈی رینارڈ( لیون )  2 پوائنٹس رہی۔


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
تازہ ترین خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.