فارن ایکسچینج کوبڑھانےکےلیےفری ہینڈ دیا جائے،ملک بوستان

image

Your browser does not support the video tag.فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کے چیئرمین ملک بوستان نے کہا ہے کہ فارن ایکسچینج کو بڑھانے کےلیے فری ہینڈ دیا جائے۔

سماء سے خصوصی بات کرتے ہوئے ملک بوستان نے کہا کہ ماضی میں ڈالر کی خریداری روکنے کے لیے اقدامات منفی ثابت ہوئے جس سے ہم کو سبق سیکھنا چاہئے۔

ملک بوستان کا کہنا تھا کہ ڈالر کی خریداری کی وجہ سے بلیک مارکیٹ وجود میں آئی جس کا فری مارکیٹ سے ریٹ 5 روپے زیادہ ہوتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہنڈی اور حوالہ کا فری مارکیٹ سے ریٹ 10 روپے زیادہ ہوتا ہے، اس صورتحال کے باعث پچھلے 3 ماہ سے 20 کروڑ ڈالر آمدنی کم ہوئی ہے اور 3 ارب ڈالر سے کم ہوکر 2 ارب 40 کروڑ ڈالر تک آگئی ہے۔

ملک بوستان نے مزید کہا کہ انٹربینک میں ایکسچینج کمپنیاں ہر ماہ 400 ملین ڈالر کا کاروبار کررہی تھیں اور اب وہ 200 ملین ڈالر کا کاروبار کررہی ہیں۔

انھوں نے یہ بھی بتایا کہ فارن ایکسچینج کمپنیوں کی نقصان کی بڑی وجہ افغانستان ہے، افغانستان کی ہر ماہ امپورٹ 500 ملین ڈالر ہے جو پاکستان، ایران اور چین سے امپورٹ کی جاتی ہے، افغانستان کے ڈالر کیوں کہ منجمد ہیں اس لئے وہ پاکستان کے ڈالر بلیک مارکیٹ سے حاصل کرلیتے ہیں۔


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.