اک دیا جلتا ہے میرے سینے میں

Poet: مبین نثار
By: Mubeen Nisar, Islamabad

اک دیا جلتا ہے میرے سینے میں
کائنات کی تاریکی میں مانند_آفتاب

گردش میں پوشیدہ ہے اسرا_فطرت
اندرون_سیپ محو_گردش ہے سیماب

شام و سحر اور  یہ عروج و زوال
عقل اٹھا نہ سکی ابتک پردہء حجاب

جی رھے ہیں زندگی  سمجھ کر
 آنکھ کھلتے ہی ٹوٹ رھے گا خواب

ستاروں کے آنسو ٹپکیں رخ_گل پر
محفل_ شب جب گرماتا ہے مہتاب

روح بے چینیوں میں عرش چھو آتی ہے
مگر یہ کیفیت_جذب ہے بڑی کمیاب

خدا کو پانا کوئی معمولی بات نہیں
ہزار سجدوں میں ہے اک سجدہ نایاب

 

Rate it:
18 Apr, 2018

More Sufi Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: mubeen nisar
Business, Physics & literature... View More
Visit 240 Other Poetries by mubeen nisar »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City