حالت حال میں کیا رو کے سناؤں تجھ کو

Poet: Mubashir Saeed
By: mahrukh, khi

حالت حال میں کیا رو کے سناؤں تجھ کو
تو نظر آئے تو پلکوں پہ بٹھاؤں تجھ کو

خود کو اس ہوش میں مدہوش بنانے کے لیے
آیت حسن پڑھوں دیکھتا جاؤں تجھ کو

تو نہیں مانتا مٹی کا دھواں ہو جانا
تو ابھی رقص کروں ہو کے دکھاؤں تجھ کو

کر لیا ایک محبت پہ گزارا میں نے
چاہتا تھا کہ میں پورا بھی تو آؤں تجھ کو

اب مرا عشق دھمالوں سے کہیں آگے ہے
اب ضروری ہے کہ میں وجد میں لاؤں تجھ کو

کیوں کسی اور کی آنکھوں کا قصیدہ لکھوں
کیوں کسی اور کی مدحت سے جلاؤں تجھ کو

عین ممکن ہے ترے عشق میں ضم ہو جاؤں
اور پھر دھیان کی جنت میں نہ لاؤں تجھ کو

اس نے اک بار مجھے پیار سے بولا تھا سعیدؔ
میرا دل ہے کبھی سینے سے لگاؤں تجھ کو

Rate it:
16 Feb, 2020

More Mubashir Saeed Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Owais Mirza
Visit Other Poetries by Owais Mirza »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City