دوریوں کے آغاز سے بڑا بے قرار ہوں

Poet: Syed Ali Abbas Kazmi
By: Syed Ali Abbas Kazmi , Sahiwal

دوریوں کے آغاز سے بڑا بے قرار ہوں
کسے حال دل سناؤں بڑا بے قرار ہوں

بیتی ہیں مجھ پے بڑی ہی آزمائشیں
گزرے تمام لمہوں سے بڑا بے قرار ہوں

جتنے بھی دکھ سہے اس کی چاہ میں
میرے دل پے ہیں لکھے بڑا بے قرار ہوں

اک آرزو رہی فقط اس کو پانے کی
پر وہ رہا لاحاصل بڑا بے قرار ہوں

بڑی کٹھن ہے گزری اس کی یاد میں
کوئی اسے بتا دے بڑا بے قرار ہوں

سنتی چلی آئے گلے سے لپٹ کہے
ساک تھا کہاں تُو بڑا بے قرار ہوں

Rate it:
12 Jul, 2020

More Urdu Ghazals Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Syed Ali Abbas Kazmi
Visit 40 Other Poetries by Syed Ali Abbas Kazmi »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City