روشنی سے آگے کی بات ہے

Poet: مبين نثار
By: Mubeen Nisar, Islamabad

روشنی سے آگے کی بات ہے
بس نور_ ذات ہی ذات ہے

کلیم الله ہے اور طور ہے
تقاضا_عشق ہے اور التفات ہے

آزمائش کڑی سے گزرنا ہے
سفر_ محبت کی شروعات ہے

دین و ایمان تولے جائیں گے
میزان_ حق ہے اور مکافات ہے

خدائے رحمن و رحیم کے حضور
ندامت ہے التجا ہے درخواست ہے
 

Rate it:
26 Feb, 2017

More Sufi Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: mubeen nisar
Business, Physics & literature... View More
Visit 240 Other Poetries by mubeen nisar »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City