وہ چلارہا ہے خنجر میں بیان دے رہا ہوں

Poet: Dr Masood Mehmood Khan
By: Masood Mehmood Khan, Perth Australia

مرے سامعین تم پر میں دھیان دے رہا ہو
وہ چلارہا ہے خنجر میں بیان دے رہا ہوں

سرِ منبر آکر اس کو یونہی کوستا رہوں گا
کسی روز گر مرے گا میں زبان دے رہا ہوں

میں جوبات کہ رہا ہوں اسے تم نے ٹھیک سمجھا
نہیں کوئی دھمکی اس میں میں گیان دے رہا ہوں

میں جھٹک نہیں رہا ہوں ترے دستِ آرزو کو
تجھے تیغ کی طلب ہے میں میان دے رہاہوں

نہ ہے تو حریف میرا نہ ہوں میں ترے مقابل
تو بجا رہاہے گھنٹی میں اذان دے رہا ہوں

میں مسعود دشتِ وحشت پہ چڑھا ہوں جن سے بچ کر
وہ سمجھ رہے ہیں شاید کہ میں جان دے رہا ہوں

Rate it:
04 Oct, 2019

More Funny Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Masood Mehmood Khan
Visit 45 Other Poetries by Masood Mehmood Khan »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City