چلو اب چھوڑ دیتے ہیں

Poet: Asif Alam
By: Asif Alam, Temargarah

چلو اب چھوڑ دیتے ہیں
وہ شبنم کی گلابی کو
وہ ہمدردِ کلامی کو
چلو اب چھوڑ دیتے ہیں
جو دل کو تھوڑ دیتے ہیں
اب ان کو کیا بتاۓ ہم
تجھے اب چھوڑ چکے ہیں ہم
تم اب سنگار نہ کرنا
ہمیں سنگسار نہ کرنا
کہیں تم دور جاو نا
ہمیں تم بھول جاو نا
ابھی تو عشق باقی ہے
وہ نورانی صفحہ ہے ہم
تم اب ازاد ہو یارا
دروازے کھول دیتے ہیں
چلو اب چھوڑ دیتے ہیں
تم اب ناراض نہ رہنا
ہمی سے تو باز نہ رہنا
تعلق اب بھی باقی ہے
چلو یہ تھوڑ دیتے
چلو اب چھوڑ دیتے ہیں
جو دل کو توڑ دیتے ہیں
 

Rate it:
24 Sep, 2020

More Urdu Ghazals Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Asif Alam
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City