نازکی اس کے لب کی کیا کہئے

Poet: میر تقی میرBy: Ijlal, Peshawar

نازکی اس کے لب کی کیا کہئے
پنکھڑی اک گلاب کی سی ہے

Rate it:
Views: 877
10 Jul, 2021