بھرے مکاں کا بھی اپنا نشہ ہے کیا جانے

Poet: وسیم بریلویBy: Junaid, Karachi

بھرے مکاں کا بھی اپنا نشہ ہے کیا جانے
شراب خانے میں راتیں گزارنے والا

Rate it:
Views: 395
30 Mar, 2021