مقام

Poet: Rida soomro By: Rida, Mirpurkhas

گرتے ہیں سجدوں میں جو اگر پڑتا ہے کام
اور رب عطا کردیتا ہے جس کا لیتے ہیں نام

گم ہو جاتے ہیں دنیا میں جب ملتا ہے مقام
جاگ اٹھتے ہیں شکوہ لیے جب چھن جاتاہے نام

نفس کے لیے جیتے ہیں نفس کے لیے روتے ہیں
رب کی محبت میں انسان کہاں روتے ہیں

ڈھونڈنے نکلتے ہیں سکون دولت کے نوٹوں میں
قلب میں صحرا بنائے پھرتے ہیں ہوس دنیا میں

وہ نافرمان بندے کو بھی کردیتا ہے ہر چیز عطا
اے انسان اک بار رب کا فرمانبدار ہو کر تو دیکھ

روشن کر قلب کے اندھیروں کو ذکر رب سے
مل جائے گا تجھے دنیا اور آ خرت میں مقام

Rate it:
Views: 628
28 Apr, 2020