ندامت کے آنسو۔۔۔

Poet: اسد جھنڈیر۔۔۔ By: اسد جھنڈیر۔۔۔, mps

 چلو موت کو گلے لگا کر دیکھیں
زندگی سے پیچھا چھڑا کر دیکھیں

گھٹ گھٹ کر جینے سے باریا بہتر ھے
خود کو صفحہ ہستی سے مٹا کر دیکھیں

جب کوئی حسرت نہیں جیتے رہنے کی
پھر کیوں نہ زندگی کی کشتیاں جلا کر دیکھیں

سنا ھے بر آ جاتی ھے ہر دعا مانگی
چل ہم بھی امید کوئی بندھا کر دیکھیں

شاید انہیں آ جائے اسد تھوڑا ترس ہم پر
ندامت کے چند آنسو سہی بہا کر دیکھیں

Rate it:
Views: 123
15 Jun, 2022
Related Tags on Life Poetry
Load More Tags
More Life Poetry
Popular Poetries
View More Poetries
Famous Poets
View More Poets