بگڑے ہوئے حالات میں بے نام و نشاں ہوں

Poet: وشمہ خان وشمہ
By: وشمہ خان وشمہ, منیلا

بگڑے ہوئے حالات میں بے نام و نشاں ہوں
اپنے ہی مقدر کی بہاروں میں خزاں ہوں

نفرت کی نگاہوں سے مجھے تیر نہ مارو
الفت کی زمینوں پہ ابھی رقص کناں ہوں

تو وقت کی آنکھوں کا مری جان اجالا
" میں صبح کے بے فیض چراغوں کا دھواں ہوں "

چمکا ہے ہمیشہ ہی مری آنکھ کا شیشہ
میں وقت کی آنکھوں میں محبت کا نشاں ہوں


مل جائے گا اک روز ترا عشق جزیرہ
اس آس کی کشتی پہ ابھی تلک رواں ہوں

کیوں آنکھوں سے میری یہ اداسی نہیں جاتی
کیوں وقت کے دربار پہ میں نوحہ خواں ہوں

سہمے ہوئے منظر ہیں مری راہ میں وشمہ
حالات پہ شاہد میں ابھی بار گراں ہوں
 

Rate it:
15 Jan, 2021

More Life Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: وشمہ خان وشمہ
I am honest loyal.. View More
Visit 4712 Other Poetries by وشمہ خان وشمہ »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City