وہ مجھ سے بیماری دل کا سبب پوچھتے ہیں

Poet: ماہم طاہر
By: Maham Tahir, Karachi

وہ مجھ سے بیماری دل کا سبب پوچھتے ہیں
صحتیاب ہونے لگے ہیں اور اب پوچھتے ہیں

طوفان بستی سے ہو کے گزر جاتاہے جب
ہمسائے قبیلے لوگوں کا حال تب پوچھتے ہیں

کبھی کسی ہجرے میں آ گ بھڑک آ ئے تو
قصداً ہوا کے جھونکوں کو وہ خوب پوچھتے ہیں

جہاں بھر کے ز خم نام کرنے کے بعد
کوئی مفلوج ہو جائے تو سب پوچھتے ہیں

اک رات کیا جاگ کر گزار دی میں نے
الفاظ بھی حیرت سے راز شب پوچھتے ہیں

دل ہی دل میں یوں اتنے اشعار کہہ دیے ہیں
زباں پہ کب آ ئیں گے"یہ لب پوچھتے ہیں"

بے وجہ جو خیال ذہن بیان کر رہی ہو ماہم
اتنے جو بیٹھے ہیں وہ کب پوچھتے ہیں؟
 

Rate it:
21 Feb, 2020

More Life Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Maham Tahir
Visit 13 Other Poetries by Maham Tahir »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City