چال طوفاں کی نہ موجوں کا اِشارہ سمجھے

Poet: Azra Naz
By: Azra Naz, Reading UK

چال طوفاں کی نہ موجوں کا اِشارہ سمجھے
ڈوُبتے وقت بھنور کو بھی کنارا سمجھے

توُ کسی اور کی شاموں کے اُفق پر چمکا
ہم تجھے اپنے مقدر کا ستارا سمجھے

کیا خبر تھی کہ کسی روز بنے گا دُشمن
آہ جس شخص کو ہم جان سے پیارا سمجھے

دیکھتے دیکھتے اِک پل میں زمیں بوس ہوا
ہم جسے عظمت و ایقاں کا منارا سمجھے

ڈوُبتے وقت بھی خوش فہمی کا یہ عالم تھا
ایک تنکے کو ہی ہم اپنے سہارا سمجھے

تیری نظروں کے بدلتے ہوۓ نظاروں کو
ہم بدلتے ہوۓ موسم کا اشارہ سمجھے

بڑھتا جاتا ہے یہ اِک شور سا کیسا عذرا
کیا کہا میں نے ، یہ کویٔ تو خدارا سمجھے

Rate it:
31 Dec, 2012

More Life Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: Azra Naz
My First Poetry Book DASHT E JAAN is published now and available in market.I am a caring,loving and fair play person.
Believe in truth , honesty and
.. View More
Visit 250 Other Poetries by Azra Naz »

Reviews & Comments

محترمہ عزرا ناز صاحبہ کیا کہوں کیوں دیر ہو جاتی ہے اب تو خود سے بھی شرمندگی سی محسوس ہونے لگی ہے ۔۔۔ مصروفیت کے بادل کبھی ایسے گہرے ہو جاتے ہیں کہ فرصت کی ایک کرن کو ترستا ہوں ۔۔ لیکن وہی بات کہ “ ہوئی تاخیر تو کچھ باعث تاخیر بھی تھا۔۔ آج آپ کے کومینٹس بلکہ یوں کہہ لیں جواب شکوہ دیکھنے کا اتفاق ہوا تو سوچا میری محترم شاعرہ دیر سے آنے پر کہیں خفا نہ ہو جائیں۔ آپ نے شعر کے بارے جو وضاحت فرمائی اس سے میرے ذہن میں ابہام کی کیفیت دور ہوئی اور جو ایک مزید شعر “ نام الله پہ گھر بار فدا کر دینا “ تو بہت ہی دلنشین ہے اسے تو اس غزل میں لازما“ شامل کیا جائے کہ یہ تو غزل کا تاج ثابت ہوگا۔۔۔۔ ماشاالله بہت اعلیٰ شعر ہے کہ اسے پڑھ کر تو حضرت ابو بکر صدیق رضی الله عنہ کی یاد تازہ ہو گئی جنھوں نے ایک جنگ کے موقع پر اپنا سب کچھ رسول خدا صلی الله علیہ و سلم کے قدموں میں لا کر رکھ دیا تھا اور فرمایا تھا کہ پیچھے گھر میں الله و الله کے رسول کے نام چھوڑ آیا ہوں۔ تو پھر کیا مرتبہ پا گئے یہ تو ہم سب مسلمان اچھی طرح سے جانتے ہیں ۔۔۔۔ بہت خوش رہیے اور گلاب غزل میں یوں ہی شعروں کی نازک کومل پتیاں سجاتی رہیے کھلاتی رہیے، مہکاتی رہیے۔ الله آپ کو شاد و آباد رکھے ،آمین

By: dr.zahid sheikh, lahore,pakistan on Jan, 06 2013

TU KISI AUR KI SHAMON K UFAQ PAR CHAMKA
HUM TUJHEY APNEY MUQADAR KA SITARA SAMJHEY
BEAUTIFUL EXPRESSION OF INNER GRIEF .A THERMOMETER WHICH SHOWS THE HEAT OF DISAPPOINTED LOVE................. I DEEPLY FELT THE PHONETIC BEAUTY AND FRAGRANCE OF UR GHAZAL ,ALSO REALIZED HIDDEN SORROW IN IT...THERE IS TO MUCH TO SAY FOR UR THIS PARAMOUNT POETRY BUT PRESENTLY TIME IS A BIG HURDLE IN FRONT OF ME .ALREADY COMMENTED ON THE SAME GHAZAL AND POINTED OUT SOME FLAWS IN THE SECOND LAST VERSE .PLEASE ANALISE .IF YOU FEEL IT NOT TRUE THAN SORRY FOR MY UNREAL CRITICISM ON IT AS THAT WAS JUST MY OPINION AND NOT MY JUDGEMENT .BE HAPPY AZRA NAZ SAHIBA

By: dr.zahid sheikh, lahore,pakistan on Jan, 03 2013


زاہد صاحب آپ کا تبصرہ پڑھا۔بہت شکریہ ۔آپ کو میرا شعر ؏ تو کسی اور کی شاموں کے اُفق پر چمکا ---پسند آیا اس کے لیۓ تہۂ دل سے آپ کی ممنون ہوں۔آپ نے بہت اچھے اور اپنے مخصوص انداز میں دل کھول کر تعریف کی ہے اور میرے ایک شعر کی وضاحت بھی چاہی ہے جو آپ کو بے ربط لگا۔میں پوری کوشش کروں گی کہ اس کی وضاحت کر سکوں۔
؏ تیری نظروں کے بدلتے ہوۓ نظاروں کو
ہم بدلتے ہوۓ موسم کا نظارا سمجھے
میں نے اس شعر میں یہ واضح کرنے کی کوشش کی ہے کہ محبوب کی بے اعتنایٔ کو محبوبہ کبھی اس کی مجبوری،کبھی اس کی مصروفیات،کبھی ماحول کی وجہ سے اور کبھی بدلتے ہوۓ حالات کا نتیجہ سمجھتی رہی حالانکہ معاملہ کچھ اور ہی تھا۔گویا نظروں کے بدلتے ہوۓ رنگ محبوب کی اندرونی بدلی ہویٔ نیت اور کیفیت کی وجہ سے تھے۔جبکہ محبوبہ خود کو طفل تسلیوں سے بہلا رہی تھی اور اصل معاملہ سمجھ نہیں پا رہی۔
اب اگر آپ کو یہ ٹھیک لگ رہا ہے تو بتایۓ ورنہ اس شعر کو نظر انداز کر کے اس کی جگہ یہ شعر پڑھ لیجیۓ
؏--نامِ اللہ پہ گھر بار فدا کر دینا
منفعت تھی، جسے نادان خسارہ سمجھے
اتنی مصروفیت کے باوجود آپ نے میری غزل کو عزت بخشی اور وقت نکال کر تبصرہ بھی کیا،اس عنایت کے لیۓ بہت بہت شکریہ۔خوش رہیۓ اور جیتے رہیۓ۔
By: Azra Naz, Reading UK on Jan, 05 2013

Wah bohat khoob written in a decent poetic manner but if u don't mind second last verse is needed to be revised .very humbly, am unable 2 understand its actual meaning.however, ghazal is marvelous as usual having proper use of words and traditional diction of eastern poetry.Allah bless u .be happy Azra Naz sahiba

By: dr.zahid sheikh, lahore,pakistan on Jan, 03 2013

Very Niceeeeeee Poetry ..................... so beautiful poetry Arza Sis

By: AF(Lucky), Saudi Arabia on Jan, 02 2013

Thank u so much dear Lucky for ur nice comments.Be happy and God bless u.
By: Azra Naz, Reading UK on Jan, 03 2013

Outstanding appreciation and encouragement Jamil.Thanks a lot for ur sincere and sensitive comments.U always cheer m up with ur warming comments.God bless u and may u live long.May God fullfill all ur wishes throughout ur life.Amin.

By: Azra Naz, Reading UK on Jan, 02 2013

بہت خوبصورت غزل ہے محترمہ آپ ہمیشہ ہی بہت اچھا لکھتی ہیں آپ کو نئے سال کی بھی مبارک باد دیتا ہوں خوش رہیں

By: Nadeem Haq, Multan on Jan, 02 2013

Bohat bohat shukria Nadeem aap ka.Aap ki mubarak sar aankhon par.Bohat arsey bad aap ka tabsarah parrh kar aik khushgawar sa ehsaas huwa.Nia saal aap ko bhi mubarak ho aur Khuda karey yeh nia saal apney daman main aap ke liye bohat sari khushian le kar aaya ho.Khush raheye aur jeetey raheye.Amin.
By: Azra Naz, Reading UK on Jan, 02 2013

Second last sher ke doosrey misrey main " Ishara " ki bajaey " Nazaara " parrha jayey. Shukria.

By: Azra Naz, Reading UK on Jan, 02 2013

Azra sahiba Jamil bhai aurShaheen sahiba nd
wo sab keh diya jo muje kehna tha
keep up nice poetry

By: asghar, birmingham on Jan, 02 2013

Dhair sara shukria Asghar aap ka.Aap ka tabsarah goya koozey main darya ki tarah hai.Aap ne bohat acchey andaz main tabsarah lia hai jis ke liye main dil se aap ki mamnoon hoon.Khush rahey aur jeetey raheye.Amin.
By: Azra Naz, Reading UK on Jan, 02 2013

SWEET SWEET ,SO SWEET SIS AZRA NAZ G! AAJ SUCH aap p barra pyaar aa raha hai , kis khoobsurat andaz se aap ne jazbaat ke akkasee ke hai , fantastic . dill se daad qbool frmayen .hamesha har gumm aap se door rahay . muskuratee rahain , ameen

By: Shaheen Mughal, gjn,Pakistan on Jan, 02 2013

My sweet sweet and sweetest sis Shaheen.Aap ka tabsarah parrha,dil bagh bagh yani garden garden ho geya.Aap ki is muhabbat ke liye mery pas shukria ada karney ke liye alfaz nahin hain.Aaap such much jaisey koi jadoo ki charri ghuma kar aik dum dil khush kar deti hain.Aap ke lafzon ka jadoo such much mashoor kar deta hai.Jeeti rahoo little sis.God bless u.Khuda karey yeh nia saal aap ke liye apney daman main hazaron khushian bhar ke laya ho. Amin.Hamesha khush rahain aur jeeti rahai.Amin.
By: Azra Naz, Reading UK on Jan, 02 2013

Kia Baat Hai Azra Sahiba .. what a wonderful poetry .. lajawab and baymisl use of words, bahut khoob , lot of countless dad kabool karian. Be Happy Always.
Sunder Khan
KSA

By: Sunder Khan, KSA on Jan, 02 2013

Sunder Khan Sahib aap ka tabsarah parrha,parrh kar dil bagh bagh ho geya.Bohat lajawab aur be misal lafzon se saja yeh tabsarah mujhey be had accha laga.Khush raheye hamesha aur jeetey raheye.Naye saal ki mubarkbad qabool kijiye.
By: Azra Naz, Reading UK on Jan, 02 2013

Outstanding Azra Ji..... You come after long time but with full of passion and fresh energy...... I like your poem very much......I always pray for your long life and prosperity..........be happy.......

By: jamil Hashmi, Rawalpindi on Jan, 02 2013

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City