یوں دیکھتے رہنا اسے اچھا نہیں محسنؔ

Poet: محسن نقویBy: Tooba, Toronto

یوں دیکھتے رہنا اسے اچھا نہیں محسنؔ
وہ کانچ کا پیکر ہے تو پتھر تری آنکھیں

Rate it:
Views: 1194
30 Jul, 2021